2018-19 لیباٹری 
میں حفاظت سے متعلق معائدہ

PWCS کا دفتر برائے سائنس اور خاندانی زندگی کی تعلیم Julia Renberg، سپروائزر

سائنسی قواعد پر عبور حاصل کرنے کیلیئے لیبارٹری کی خود مختار پڑھائی نہایت ضروری ہے۔ لیب میں مطالعہ کے دوران، طلباء ایسی سرگرمیاں کریں گے جن کیلیئے مضر مواد اور آلات کے استعمال کی ضرورت پڑ سکتی ہے۔ محفوظ اور فائدہ مند تعلیمی ماحول ہر طالبعلم/طالبہ کا حق ہے۔ کسی بھی لیبارٹری کام سے پہلے، طالبعلم/طالبہ اور والد والدہ/سرپرست دونوں کو منسلکہ معاہدہ پر دستخط کرنا ہیں اور جو استاد/استانی کے پاس فائل میں موجود رہے گا۔

A.  سائنس کے کمرۂ جماعت میں طرزعمل

1. لیبارٹری میں داخل ہونے کا مطلب ہے کہ طالبعلم/طالبہ کمرۂ جماعت کے استاد/استانی کی ہدایات پر عمل کرنے پر متفق ہے۔
2. جب تک استاد/استانی کی طرف سے  مناسب ہدایات اور اجازت نہیں ملتی، طلباء آلات کو ہاتھ نہیں لگائیں گے۔
3. طلباء کو لیبارٹری میں ہر روز ذمہ دارانہ طریقے سے اچھے کردار کا مظاہرہ کرنا ہے۔ خرمستیاں، عملی مذاق، اور غیر مہذب حرکتیں خطرناک اور ممنوع ہیں۔ 
4. طلباء کو دیکھ بھال کے اچھے طریقوں کا مشاہدہ کرنا چاہیے۔ کام والی جگہ کتابوں اور بستوں سے پاک ہونی چاہیئے۔ لیب سے نکلنے سے پہلے کام کی جگہ کو اچھی طرح صاف کرنا چاہیئے۔
5. طلباء کو کرسیوں پر پاؤں رکھنے یا لیب کی میزوں اور بینچوں پر بیٹھے کی اجازت نہیں ہے۔
6. غیر مجاز تجربات کی اجازت نہیں ہے۔
7. خوردونوش، آرائشی سامان اور چیونگم، کی سائنس کے کمرۂ جماعت میں اجازت نہیں ہے۔
8. لیب سے نکلنے سے پہلے، طلباء کو اپنے ہاتھ صابن اور پانی سے اچھی طرح دھونے چاہیئے۔ 
9. خطرناک مواد کے ساتھ کام کرتے ہوئے جلد کی حفاظت ضروری ہے۔ چھوٹی سکرٹ یا شارٹ پہننے والے طلباء کو لیب اپرن پہننے چاہيئے۔ پاؤں کو محفوظ رکھنے کیلیئے بند جوتے لازمی ہیں۔ 
10. کھلے شعلوں کے ساتھ کام کرتے ہوئے، لمبے بالوں کو پیچھے باندھنا چاہیے اور ڈھیلے کپڑوں کو محفوظ کرنا چاہیئے۔

B.  لیباٹری میں حفاظتی آلات

1. کچھ مخصوص سرگرمیوں کے دوران، طلباء سکول کی طرف سے فراہم کیئے گئے سپلیش سے پاک حفاظتی عینکیں پہنیں گے، جیسا کہ ریاست ورجینیا کے کوڈ، سیکشن 22 10-2 میں بیان کیا گیا ہے: "ہر طالبعلم/طالبہ جو ایسے لیبارٹری کام میں شرکت کر رہا/رہی ہے جس میں کاسٹک یا دھماکہ خیز کیمیکل یا گرم مائع یا ٹھوس شامل ہیں، انہیں ہر وقت صنعتی معیار کے آنکھ کے حفاظتی آلات پہننا ہوں گے۔"
2. لیبارٹری میں گیس کی سرایت شدہ سطح کے ذریعے پھیلنے والے ممکنہ نقصان دہ دھوئیں کی وجہ سے، کانٹیکٹ لینس پہننے کی حوصلہ شکنی کی جاتی ہے۔ اگر طالبعلم/طالبہ کو کانٹیکٹ لینس پہننے ہیں تو انہیں لیبارٹری میں کام کرنے کیلیئے وینٹ کے بغیر گاگل استعمال کرنے کی درخواست کرنی چاہیئے۔ استاد/استانی کی ہدایت کے مطابق لیباٹری ایپرن اور دستانے پہننے چاہیئں۔
3. ہر لیبارٹری میں عمومی اور خصوصی حالات سے نمپٹنے کیلیئے مخصوص حفاظتی آلات موجود ہیں۔ طلباء درج ذیل کے مقام، کام اور محفوظ عمل کو جاننے کے ذمہ دار ہیں:
فیوم ہُڈ: مقامی وینٹیلیشن ڈیوائس کے لئے فراہم کیا جاتا ہے، اس کو مضر یا زہریلے دھوئیں، بخارات یا دھول کو پھیلنے سے روکنے کیلیئے ڈیزائن کیا گیا ہے۔
آگ بجھانے والا آلہ: کاربن ڈائی آکسائیڈ یا خشک کیمیکل پروپیلنٹ ٹینک جو لیبارٹری میں لگنے والی آگ بجھانے کیلیئے استعمال ہوتا ہے۔
آگ بجھانے والا کمبل: ایک گھنا، آگ نہ پکڑنے والا مواد جو بالوں یا کپڑوں پر لگنے والی آگ پر قابو پانے کیلیئے استعمال کیا جاتا ہے۔
شاور [بوچھاڑ ڈالنا]:  کسی کے اوپر کیمیکل گرنے کی صورت میں کیمیکل کو صاف کرنے کیلیئے پانی کی تیز دھار استعمال کی جاتی ہے۔
آنکھ کا دھونا:  کیمیکل گرنے کی صورت میں آنکھوں، ناک، یا منہ کو دھونے کیلیئے پانی کی تیز دھار کو استعمال کیا جاتا ہے۔ 
 
C.  ہنگامی صورتحال کے طریقہ کار

1. جب بھی کوئی چوٹ لگے یا حادثہ پیش آئے، استاد/استانی کو فوراً حادثے کی رپورٹ دینی چاہیئے۔
2. اگر کوئی کیمیکل جلد پر گر جائے تو فوراً بہتے ہوئے پانی کے نیچے دھوئيں اور استاد/استانی کو باخبر کریں۔
3. لیبارٹری میں ہنگامی صورتحال کے نتیجے میں، طلباء کو کام روک دینا چاہیئے، اور استاد/استانی کی طرف سے ہدایات ملنے تک خاموشی سے انتظار کرنا چاہیئے۔

D.  آلات کا استعمال

1. غفلت کی وجہ سے ٹوٹنے والے سامان کی ذمہ داری طالبعلم/طالبہ کی ہو گی۔
2. طلباء کو استاد/استانی کو کسی بھی ٹوٹے ہوئے یا غیر فعال سامان کی رپورٹ فوری طور پر کرنی چاہیئے۔
3. طلباء کو استعمال سے قبل کانچ کی اشیاء کا دھیان سے جائزہ لینا چاہیئے۔ ٹوٹے ہوئے یا چٹخے ہوئے شیشے کو کبھی گرم مت کیجیئے۔ 
4. طلباء کو کبھی بھی ٹوٹی ہوئی کانچ کی اشیا کو ہاتھوں سے نہیں پکڑنا چاہیئے۔ ٹوٹے ہوئے ٹکڑوں کو جھاڑو اور چھوٹے کوڑے دان کے ذریعے صاف کرنا چاہیئے اور ٹوٹے ہوئے شیشے کے مخصوص ڈبے میں ڈالنے چاہیئے۔

E.  کیمیائی اور حیاتیاتی مواد کے استعمال کا طریقہ

1. لیبارٹری میں تمام کیمیکلز خطرناک تصور کیئے جاتے ہیں۔ جب تک استاد/استانی کی طرف سے واضح ہدایات نہ ہوں، کسی کیمیکل کو چھونا، چکھنا یا سونگھنا منع ہے۔ 
2. کیمیکل بوتلوں سے مواد نکالنے سے پہلے ان کے لیبل کو احتیاط سے چیک کیجیئے۔ کسی بھی غیر لیبل شدہ برتن کی رپورٹ استاد/استانی کو کیجیئے۔
3. جب بھی تیزاب کو پتلا کرنا ہو، اس بات کا یقین کیجیئے کہ تیزاب کو احتیاط سے سے پانی میں ڈالیئے (اس کے برعکس نہیں)۔ یہ چھینٹے اڑنے کے خطرے کو کم کر دیتا ہے۔
4. طلباء کو استاد/استانی کی ہدایات کے مطابق تمام استعمال شدہ مواد ضائع کرنا چاہیئے۔ ٹھوس فضلے والی اشیاء (کانچ، دھات کے ٹکڑے، پتھر وغیرہ) کو سنک میں نہیں رکھنا چاہیے۔ کیمیائی فضلے کو ضائع کرنے سے پہلے اس کا اثر ختم کرنا چاہیئے۔
5. تیز دھار اشیاء جیسے جراحی کے چاقو کو بہت احتیاط سے استعمال کرنا چاہیئے۔ طلباء کو تیر دھار سے آگاہ ہونا چاہیئے اور کٹ لگاتے وقت اسے جسم سے دور رکھنا چاہیئے۔ 
6. طلباء کو استاد/استانی کی واضح ہدایات کے بغیر کسی زندہ یا حنوط شدہ حیاتیاتی نمونوں نمپٹنے یا انہیں مشتعل کرنے کی کوشش نہیں کرنی چاہیئے۔ طلباء کو نمونوں سے نمٹنے کے بعد اپنے ہاتھ اچھی طرح دھونے چاہیئے۔
7. کسی بھی قسم کے حالات میں کیمیائی یا حیاتیاتی نمونوں کو لیبارٹری سے باہر نہیں لے جا سکتے۔

F.  حرارتی مادے

1. طلباء کو گیس کے چولہے استعمال کرتے ہوئے بہت زیادہ احتیاط کرنی چاہیئے۔ خیال رکھیں کہ بال، کپڑے، اور ہاتھ ہر وقت شعلوں سے دور مناسب فاصلے پر رہیں۔ گیس کے چولہے کے محفوظ عمل پر بات کی جائے گی، مظاہرہ کیا جائے گا اور عملی طور پر پیش کیا جائے گا۔
2. طلباء کو بجلی کی گرم ڈیوائس جیسے گرم پلیٹ استعمال کرتے ہوئے بہت احتیاط برتنی چاہیے۔ اگر تاریں ٹوٹی ہوئی ہیں یا کنکشن ڈھیلے ہیں تو استعمال نہ کریں۔
3. جلتے ہوئے شعلے یا جلتی ہوئی آگ کو اکیلا نہیں چھوڑنا چاہیئے۔ 
4. طلباء کو کسی بھی گرم مواد کو لوگوں سے دور رکھنا چاہیے۔
5. گرم کی ہوئی دھات اور کانچ بہت دیر تک گرم رہتے ہیں۔ استعمال میں احتیاط کیجیئے۔

یہ طالبعلم/طالبہ کی ذمہ داری ہے کہ وہ لیب میں تیار ہو کر آئے، توجہ مرکوز کرے اور کام کیلیئے تیار ہو۔ استاد/استانی کو کسی بھی طالبعلم/طالبہ کو لاپرواہی یا تیاری میں مناسب کمی کی وجہ سے لیب سے نکالنے کا حق حاصل ہے۔ لیبارٹری کے یہ محفوظ رہنما اصول اس طرح ڈیزائن کیئے گئے ہیں کہ جن میں تحقیق کی جا سکے۔ ہر طالبعلم/طالبہ کو محفوظ اور آرام دہ محسوس کرنا چاہیئے اور لیب کے مواد اور آلات کو محفوظ طریقے سے استعمال کرنے میں اپنی قابلیتوں پر اعتماد ہونا چاہیئے۔

طالبعلم طالبہ کا نام:_________________________________________      کلاس پریڈ:_________
استاد/استانی کا نام:_________________________________________      سائنس کا مضمون:_______

طالبعلم/طالبہ کا معاہدہ:

میں نے اس معاہدے میں لکھے گئے تمام حفاظتی اصولوں کو پڑھ لیا ہے اور میں ان پر عمل پیرا ہونے سے اتفاق کرتا/کرتی ہوں۔ میں سمجھتا/سمجھتی ہوں کہ نہ صرف میرے بلکہ میرے ساتھیوں اور میرے استاد/استانی کے تحفظ کو یقینی بنانے کیلیئے مجھے ان اصولوں پر عمل کرنا چاہیئے۔ میں آگاہ ہوں کہ تحفظ کے اس معاہدے کی خلاف ورزی کا نتیجہ لیبارٹری سے اخراج، والد والدہ کی کانفرنس، اور/یا انتظامی ریفرل ہو سکتا ہے۔

____________________________________________ ______________________
طالبعلم/طالبہ کے دستخط                                                   تاریخ

عزیز والد یا والدہ یا سرپرست:

آپ کو ان حفاظتی ہدایات سے آگاہ ہونا چاہیئے جن کو آپ کا بیٹا یا بیٹی کسی لیبارٹری کام کو شروع کرنے سے پہلے وصول کریں گے۔ کسی بھی طالبعلم/طالبہ کو اس وقت تک لیبارٹری میں کام کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی جب تک اس معاہدے پر طالبعلم/طالبہ اور والد والدہ/سرپرست دونوں کے دستخط نہیں ہوتے اور یہ استاد/استانی کے پاس فائل میں موجود نہیں ہوتا۔ آپ کے دستخط ظاہر کرتے ہیں کہ آپ نے طالبعلم/طالبہ کے اس حفاظتی معاہدے کو پڑھ لیا ہے، سائنس لیبارٹری میں آپ کے بیٹے یا بیٹی کے تحفظ کو یقینی بنانے کیلیئے لیے جانے والے اقدامات سے باخبر ہوں، اور آپ کے بیٹے یا بیٹی کو ہدایت کرتا/کرتی ہوں کہ لیبارٹری میں ان اصولوں اور طریقہ کار پر عمل پیرا ہونے کیلیئے اس معاہدے کی پاسداری کرے۔ 
____________________________________________ ______________________
والد یا والدہ/سرپرست کے دستخط تاریخ

تبصرے اور/یا متعلقہ صحت کے مسائل:
____________________________________________________________________________


____________________________________________________________________________


____________________________________________________________________________

اس حصّے کو علیحدہ کیجیئے اور اپنے استاد/استانی کو واپس کیجیئے۔
 
سائنس کی کاپی میں حفاظتی اصولوں کی نقل رکھیئے۔