PWCS کے ہائی سکول کے ضابطۂ اخلاق کے ویڈیو سکرپٹ


یہ 2015 کے ہائی سکول کے ضابطۂ اخلاق کی ویڈیو کے ٹکروں کی نقل ہے جو http://pwcs.ss9.sharpschool.com/cms/one.aspx?pageId=789928 پر دﺳﺗﻳﺎﺏ ہے۔  
اس نقل کو عربی، فارسی، کورین، ہسپانوی، اردو، اور ویتنامی میں ترجمہ کیا گیا ہے اور  ہر زبان کی ویب سائٹ کے نظم و ضبط کے سیکشن کے تحت اور اوپر دیئے گئے لنک پر موجود ہو گا۔ 


ویڈیو 1: اپنے اعمال پر غور کیجیئے - تعارف


ویڈیو کا مقام: کیلی لیڈرشپ سینٹر


طالبعلم/طالبہ 1: اوہو، اتنی زیادہ معلومات کو صرف دو منٹ کی ویڈیوز میں کرنا بہت مشکل ہے۔


طالبعلم/طالبہ 2: اچھا، ہمارے پاس بہت سے مختلف موضوعات ہیں، لیکن ہر ایک کی اپنی ویڈیو ہے۔ اس لیئے، میرا خیال ہے کہ ہم اسے کر سکتے ہیں۔


 Mrs. Custard : آداب نوجوانوں! آپ لوگ کیسے ہیں؟  آپ لوگ کس چیز پر کام کر رہے ہیں؟


طالبعلم/طالبہ 1 اور 2: آداب، Mrs. Custard


طالبعلم/طالبہ 2: ہم ضابطۂ اخلاق کی ویڈیوز پر کام کر رہے ہیں۔


Mrs. Custard: میں اس کیلیئے بہت پرجوش ہوں۔ میں بہت خوش ہوں کہ آپ لوگ اس سال یہ کر رہے ہیں۔ تو، کیا چل رہا ہے؟ مجھے بتائیے یہ آپ ابھی کس حصے پر کام کر رہے ہیں۔


طالبعلم/طالبہ 2: ہم لباس کے قواعد و ضوابط، تلاش اور ضبطگی، ہتھیاروں پر کام کر رہے ہیں مگر میرا سکول خاص طور پر الیکٹرانک ڈیوائسز [برقی آلات] پر کام کر رہا ہے۔


Mrs. Custard: مجھے یہ تمام موضوعات پسند ہیں۔ کیونکہ یہ تمام موضوعات طلباء کیلیئے بہت بہت اہم ہیں۔ ذرا سوچیئے کہ آپ یہ پورے سکول [سسٹم] کیلیئے تیار کر رہے ہیں اور یہ بہت زبردست آلہ ہے۔ آپ لوگ جو کچھ کر رہے ہیں میں اس کیلیئے بہت پرجوش ہوں۔


سپرنٹنڈنٹ Walts:             آداب، محترمہ Custard !  طلباء۔ میں ایک میٹنگ کیلیئے جا رہا ہو لیکن میں نے آپ لوگوں کو یہاں کام کرتے دیکھا۔ آپ لوگ کس چیز پر کام کر رہے ہیں؟


Mrs. Custard: جناب، یہ ہمارے طلباء ہیں جو ہمارے ضابطۂ اخلاق کی ویڈیوز پر کام کر رہے ہیں اور میں بہت خوش ہوں۔ مجھے لگتا ہے کہ آپ اس سال کی ویڈیوز سے بہت متاثر ہوں گے۔


سپرنٹنڈنٹ Walts:            او، زبردست، یہ بہت اچھا منصوبہ ہے۔ ضابطۂ اخلاق بہت اہم ہے۔ میرا مطلب ہے کہ یہ ان چیزوں کا خلاصہ بیان کرتے ہیں جو ہمارے بچوں کے ساتھ ساتھ اساتذہ اور سکولوں کو بھی محفوظ رکھتا ہے۔ ایک چیز جو مجھے سب سے زیادہ پسند ہے وہ یہ یہ ہمارے طلباء کی توقعات کے بارے میں بات کرتا ہے جو اصل میں طلباء نے خود لکھی ہیں۔ لہذا، مجھے اس کے نتیجے سے ضرور باخبر رکھیں۔ میں اسے ضرور دیکھنا پسند کروں گا۔


Mrs. Custard: یہاں رکنے کا بہت بہت شکریہ۔


طالبعلم/طالبہ 1 اور 2: ڈاکٹر Walts بہت بہت شکریہ (اسی وقت جب Ms. Custard  نے کہا)


سپرنٹنڈنٹ Walts:             ٹھیک ہے، مجھے جانا ہے۔


طالبعلم/طالبہ 1: آپ سے مل کر خوشی ہوئی۔


ویڈیو 2: غنڈہ گردی


ویڈیو کا مقام: ورزش گاہ - (گاڑی میں اور باہر میدان پر سوچتے ہوئے)


طالبعلم 1: ارے، وہ کون ہے؟


طالبعلم 2: ارے، وہ Ryan ہے۔ وہ ایک اچھا کھلاڑی ہے۔ میں نے سنا ہے فٹ بال میں اچھا ہے۔


طالبعلم 1: فٹ بال، اے؟ ہم دیکھیں گے۔ 


Ryan: ارے، کیا میں تم لوگوں کے ساتھ ورزش کر سکتا ہوں؟


طالبعلم 1: ہمم۔۔۔ تم کون ہو؟


Ryan: میرا نام Ryan ہے۔ تم لوگ کون ہو؟


طالبعلم 1: اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا۔ اچھا، کیا تم نے کبھی وزن اٹھایا بھی ہے؟ تم نے ٹانگوں کی ورزش کیلیئے پینٹ پہنی ہوئی ہے! 


Ryan: بہرحال میں نے سوچا کہ میں تم لوگوں کے ساتھ ورزش کر سکتا ہوں۔ میرا مطلب ہے کہ ۔ ۔ ۔ ۔


طالبعلم 1: ٹھیک ہے دیکھو ۔ ۔ ۔ تم یہاں نئے لگتے ہو اور میں تمہیں آسانی سے ہر سکتا ہوں۔ بدھ کو، لیگز ڈے ہے۔ اور لیگز ڈے پر ہم سخت محنت کرتے ہیں۔ اب، تم یہاں سے نکل جاؤ!


Ryan: ٹھیک ہے، جھلجھلاتے ہوئے، ٹھیک ہے، میں سمجھ گیا۔


طالبعلم 1: کیا تم دیکھ رہے ہو؟


طالبعلم 2: مجھے نہیں معلوم وہ کیا سوچ رہا تھا۔


(پرانی یادیں - گاڑی میں)


ماں: تم اس طرح کے گریڈ لے کر کبھی اچھے کالج میں نہیں جا سکتے۔


طالبعلم 1: لیکن، مگر، مگر ماں۔


ماں: جاؤ، کلاس میں جاؤ! اور ایک دفعہ ایسے برتاؤ کرو کہ تم واقعی پرواہ کرتے ہو۔


طالبعلم 1: ٹھیک ہے، میں کروں گا! میرے خدا، ماں آپ کو سمجھ نہیں آتی!


(کھیل کے میدان سے یادیں)


لڑکیاں: (ہنستے ہوئے) او میرے خدا، مجھے یقین نہیں آتا کہ تم نے گرا دیا۔ تم واقعی فٹ بال کھیل رہے ہو؟ تمہیں چھوڑ  
دینا چاہیئے۔
(واپس ورزش گاہ میں)


طالبعلم 1: سنو! Ryan، ایک سیکنڈ کیلیئے یہاں واپس آؤ۔ دیکھو، میں جانتا ہوں کہ تم ناراض ہو اور میں نے تم سے جو کچھ کہا وہ اچھا نہیں تھا اور اس کیلیئے میں معافی چاہتا ہوں۔ اور، لگتا ہے باقی تمام جگہیں بھری ہوئی ہیں، تو ہمارے ساتھ ورزش کرنے کے بارے میں کیا خیال ہے؟


Ryan: ٹھیک ہے ۔ ۔ ۔ چلو ورزش کریں!


طالبعلم 1: او ہاں! بیٹھو، بیٹھو۔ ٹھیک ہے، اپنی پسلیاں سیدھی کرو۔ تمہیں ٹانگوں کی ورزش کے بارے میں سنحیدہ ہونا ہے۔


Ryan: او ہاں!


ویڈیو 3: الیکٹرانک ڈیوائسز [بجلی سے چلنے والے آلات]


ویڈیو کا مقام: کمرۂ جماعت / کیفے ٹیریا

(کمرۂ جماعت)


استانی: اب جب ہم نے اپنی U اور V مساواتوں کے بارے میں فیصلہ کر لیا ہے کہ تو ہم انہیں اس فارمولا میں رکھیں گے۔ ہم اس یونٹ کو بہت زیادہ استعمال کریں گے لہذا تسلی کیجیئے کہ آپ نے اسے سمجھ لیا ہے۔  (مڑتے ہوئے) کیا؟


طالبہ:            آپ رک کیوں گئیں؟ میں کوشش کر رہی ہوں کہ ہر چیز سمجھ لوں۔


استانی:    کیا آپ لوگوں کو پرنس ولیئم کاونٹی میں ریکارڈنگ سے متعلق پالیسیوں کے بارے میں معلوم نہیں ہے؟


تمام طلباء: نہیں۔


استانی: ٹھیک ہے آپ نے یہ سیٹ اپ کیا ہے، متاثر کن ہے مگر پرنس ولیئم کاونٹی میں ریکارڈنگ ایک نجی معاملہ ہے۔ کسی بھی شخص کو ریکارڈ کرنے سے پہلے آپ کو ہر اس شخص سے ریکارڈ کرنے کی اجازت لینا ہو گی جو کہ متوقع طور پر ریکارڈ ہو سکتے ہیں۔ اور یہ صرف ویڈیو پر ہی نہیں بلکہ سیل فون اور آواز کی ریکاڈنگ پر بھی لاگو ہوتا ہے۔


(گھنٹی بجتی ہے)


استانی:     وہ گھنٹی ہے۔ ہم اسے دوپہر کے کھانے کے وقفے کے بعد مکمل کریں گے۔

(کیفے ٹیریا)


طالبعلم 1: بہت عجیب تھا وہ ریکارڈنگ کا تمام سامان جماعت میں لائی۔ مجھے یقین نہیں کہ ہے کہ وہ وہاں تھا۔


طالبعلم 2: ہاں، وہ عجیب تھا۔ اچھا، اس سے یاد آیا۔ میں تمہیں وہ ویڈیو دکھانا چاہتا ہوں جو کل رات میں نے انٹرنیٹ پر دیکھی۔ او ہاں


طالبعلم 1: میں ابھی تک سکول میں پالیسی سے عادی ہونے کی کوشش کر رہا ہوں۔ میرے پرانے سکول میں ہمیں دوپہر کے کھانے کے  وقفے میں اپنی الیکٹرانکس لانے کی اجازت نہیں تھی۔


طالبعلم 2: ہمم، میرا خیال ہے تم ٹھیک ہو۔ لیکن میں دفتر سے دوبارہ تسلی کروں گا کہ اگر یہ ٹھیک ہے تو۔


طالبعلم 1:  مجھے ابھی بھی یقین نہیں ہے کیونکہ میں جانتا ہوں کہ کچھ ویڈیوز سکول کیلیئے مناسب نہیں ہیں اور میں جانتا ہوں کہ 
سکول کی بنیاد پر اصول تبدیل نہیں ہوتے۔


طالبعلم 2: ہمم، تم ٹھیک ہو۔ شاید برا خیال ہے۔


طالبعلم 1:  ہاں، میرا خیال ہے ہمیں یہ نہیں کرنا چاہیئے۔


طالبعلم 2: ارے، قطار چھوٹی ہے، چلو کھانا لیں۔


طالبعلم 1:  ٹھیک ہے

(طلباء نے کمپیوٹر پر کھانا گرا دیا)


طالبعلم 2: ایسا نہیں ہو سکتا۔


طالبعلم 1: آہ، دیکھو! تمہارا لیپ ٹاپ خراب ہو گیا! ہمم ۔ ۔ ۔ ۔


طالبعلم 2: تمہیں پتہ ہے سکول اس کا ہرجانہ دے گا! یہ میری غلطی نہیں!


طالبعلم 1: معافی چاہتا ہوں، مگر اصولی طور پر سکول اس کیلیئے ادا نہیں کر سکتا کیونکہ وہ ذمہ دار نہیں ہیں اور تم اپنا لیپ ٹاپ اپنی ذمہ داری پر سکول لائے۔ لیکن، میرا مطلب ہے کہ اس کا مثبت پہلو دیکو۔ مفت نیچوس!


لڑکیاں پیچھے سے: نیچوس!!


ویڈیو 4: نافرمانی / بدتمیزی


ویڈیو کا مقام: کمرۂ جماعت


Dejah:  اس کے کپڑے دیکھو۔ مجھے یقین نہیں آتا کہ پارٹی میں اس نے یہ پہنا۔


 Ms. Red : ای او، اس نے کیا پہنا ہے؟


 Dejah : مجھے نہیں معلوم، مگر کسی کو اسے بتانا چاہیئے۔


 Ms. Red : معاف کیجیئے، کیا وہ فون ہے؟


 Dejah:  نہیں۔


Ms. Red: آپ کو اصول معلوم ہیں، آپ اسے کلاس میں نہیں رکھ سکتے۔


 Dejah :Ms. Red، آپ کیوں پریشان ہیں؟ مجھے سمجھ نہیں آت کہ میں اپنا فون کیوں نہیں نکال سکتی؟


Ms. Red: ابھی میں آپ سے آرام سے کہہ رہی ہوں۔ لہذا، آپ مجھے اپنا فون دے سکتی ہو یا پھر میں انتظامیہ کو بلاؤ گی۔


Dejah : (دماغ میں برا خیال): دیکھو! اسے اپنے ساتھ اس انداز میں بات مت کرنے دو! تمہیں جو کرنا ہے وہ کرنا ہے اور 
پیچھے رہو! تم جسے بلانا چاہتی ہو بلا لو میں کسی کی پرواہ نہیں کرتی۔ 


 Dejah: (دماغ میں اچھا خیال): دیکھو، یہ پاگل پن ہے۔ میرا مطلب ہے، کہ یہ بات اس قابل نہیں کہ میرا فون لیا جائے۔


 Dejah : Ms. Red میں معافی چاہتی ہوں۔ مجھے اپنا فون باہر نہیں نکالنا چاہیے تھا۔ مجھے امید ہے کہ دن کے اختتام پر مجھے اپنا فون واپس مل جائے گا۔


 Ms. Red: مجھے خوشی کہ آپ سمجھ گئی۔ لیکن ہاں، آپ کو یہ دن کے اختتام پر واپس مل جائے گا۔


 Dejah : آپ کا شکریہ۔


طالبعلم 1:              …. بہت اچھا۔


 Dejah:  شکریہ


طالبعلم 2: زبردست، میں واقعی متاثر ہوں۔ میں اسے کھو دیتا۔


طالبعلم 3: زبردست


طالبعلم 4: ہاں، واقعی۔


طالبعلم 5: بہت اچھا، Dejah


 Dejah : آپ کو ہر حال میں اساتذہ کی عزت کرنی ہے۔

ویڈیو 5: منشیات / شراب


ویڈیو کا مقام: سکول کا ہال اور کمرۂ جماعت

(ہال) 


طالبعلم 1: تمہارے پاس ابھی بھی پاٹ [بھنگ کی کسی قسم کا ایک نام] ہے۔


طالبعلم 2: او ہاں


طالبعلم 3: آٹھ اونس، صحیح؟


طالبعلم 2: ہاں، میرے پاس ہے۔


طالبعلم 1: ٹھیک ہے۔


(کمرۂ جماعت)


استانی:           Mia


Mia: یہاں


استانی:            John Luke


John Luke:      حاضر


استانی:        Phillip


Phillip:           یہاں


استانی:              Eric


Eric:         یہاں


استانی:       Kalen


 Kalen:        یہاں


استاد:           Ms. Smith، مداخلت پر معافی چاہتا ہوں، مجھے Daylin سے بات کرنی ہے۔


تمام طلباء: اووووووہہہہہہ

(منتظم کا دفتر)


استاد:          یہاں تشریف رکھیئے


Daylin:      ڈیڈ، آپ یہاں کیا کر رہے ہیں؟


Dad :     بیٹے، مجھے تمہارے سکول سے فون آیا اور مجھے یہاں آنے کو کہا۔


منتظم:     کیسے ہو Daylin، کیا تمہیں معلوم ہے کہ ضابطۂ اخلاق کے مطابق پرنس ولیئم کاؤنٹی سکولز میں کونسے مواد 
                   کی اجازت نہیں ہے؟


Daylin      : ہاں جیسے شراب، تمباکو، اور دیگر منشیات، صحیح؟


منتظم:      جی جناب اور اس کے ساتھ ساتھ دیگر نسخہ جاتی ادویات، ادویات جیسی لگنے والی اور منشیات اور شراب کے مال اسباب۔ 


Daylin      : ایک منٹ، منشیات یا شراب جیسی لگنے والی اشیاء پر بھی میں مشکل میں پڑ سکتا ہوں۔


منتظم:       جی ہاں، اگر آپ شراب یا دیگر منشیات جیسے دکھنے والی اشیاء کو ظاہر کرنے کی نیت کریں تو آپ ان منشیات کو وصول کرنے،           منشیات کو خریدنے یا کسی منضبط مواد کی تقسیم کی کوشش کیلیئے مشکل میں آ سکتے ہیں۔


Dad:       میرے بیٹے کو کس قسم کی سزا ہو سکتی ہے؟


منتظم:      ورجینیا کے قانون کے مطابق، کسی بھی طالبعلم/طالبہ کے بارے میں اگر بورڈ تعین کرے کہ وہ سکول کی املاک یا سکول تقریبات           میں منضبط مواد لایا ہے تو اسے نکال جا سکتا ہے۔


ڈیڈ اور  Daylin: اخراج؟


منتظم:    Mr. Howe، کیا آپ کسی منضبط مواد کی تلاش کیلیئے، ہمیں اپنے بیٹے کا بستہ تلاش کرنے کی اجازت دیتے ہیں۔


: Dad : جی ہاں، میں منظوری دیتا ہوں مگر میں امید کرتا ہوں کہ آپ کو کچھ نہ ملے۔


استاد:       مجھے اپنا بستہ دیجیئے؟ (بستہ کھولتا ہے) اوہ، یہ تو پھولوں کا گملہ ہے [پاٹ]۔


منتظم:     (ہنستے ہوئے)


 Daylin:     یہ فن کے ایک منصوبے کیلیئے ہے۔


منتظم: پریشانی کیلیئے معذرت۔ Daylin، آپ اپنی جماعت میں واپس جاسکتے ہیں اور آپ کا دن اچھا گزرے۔


(ہال)


تمام طلباء: ہال میں باتیں کرتے ہوئے


طالبعلم 1: تم سب کے پاس بوتلیں ہیں، صحیح؟


طالبعلم 2: تمہارے پاس میری بوتل ہے صحیح؟


تمام طلباء: او ہاں


طالبعلم 3: یہ کھیل بہت جاندار ہو گا!


تمام طلباء: او ہاں!


(جم)


استاد:                   آپ سب لوگ میرے ساتھ آئیں۔


تمام طلباء: کیا:


استاد:                    کیا آپ لوگوں کو معلوم ہے کہ میں آپ سب کو یہاں باہر کیوں لایا ہوں؟


طالبعلم 1: نہیں، مگر کیا ہم واپس کھیل پر جا سکتے ہیں؟


استاد:                     کیا آپ کو احساس ہے کہ سکول املاک پر اور سکول کے دوران اور سکول کے بعد شراب اور منشیات ممنوع ہیں۔


طالبعلم 2: ہاں، کیوں؟


استاد:                     میں نے آپ سب کو باتیں کرتا سنا کہ آپ آج رات کھیل میں بوتلیں لا رہے ہیں اور مجھے یہ بہت مشکوک لگا کیونکہ
آپ سب کے پاس بستے ہیں۔


تمام طلباء: (ہنستے ہوئے)


طالبعلم 3: واؤ، ہم سب بوتلیں لائیں ہیں ۔ ۔ ۔ 


تمام طلباء: ۔ ۔ ۔ ری سائیکل تقریب کیلیئے!


استاد:              اوہ، میں معافی چاہتا ہوں۔ کھیل سے لطف اندوز ہوئیے۔


طالبعلم 4: ہماری حفاظت پر نظر رکھنے کا شکریہ۔

ویڈیو 6: سکول املاک سے باہر خلاف ورزیاں


ویڈیو کا مقام: چائے پیتے ہوئے باہر کا مقام


طالبہ 1:              میں بہت خوش ہوں کہ موسم بہار کیلیئے ہمیں پورے ایک ہفتے کی چھٹیاں ہیں۔ میں اس نئے لڑکے Jay کے ساتھ  
گھوموں پھروں گی۔


طالبہ 2:  اوہ، Jay، تم خیال رکھنا۔ وہ Liz کے ساتھ ملتا تھا اور وہ پاگل ہے۔ جب اسے پتہ چلا کہ وہ دوسری لڑکی کے ساتھ بات      کر رہا تھا۔ وہ دوپہر کے کھانے پر آئی اور اس لڑکی کے ساتھ لڑائی کی۔ جس کا نتیجہ دونوں کی معطلی تھا۔


طالبہ 1:   لیکن، Jay کا کہنا ہے کہ ان کا تعلق ختم ہو گیا ہے، تو وہ میرے ساتھ کوئی مسئلہ کیوں کرے گی؟


طالبہ 2:  کبھی کبھی تم نہیں جانتے۔ میں نے سنا ہے کہ وہ بہت حسد کرتی ہے۔ 


طالبہ 1: اوہ میرے خدا۔ Jay نے ابھی ابھی مجھے ٹیکسٹ بھیجا ہے کہ Liz نے ٹیوٹر پر پوسٹ کیا ہے کہ وہ میرے ساتھ لڑائی کرے گی اور اس کا دوست چرانے پر مجھے پیٹے گی۔


طالبہ 2 : وہ ایسا کیوں کرے گی؟


طالبہ 1: اس کے ساتھ کیا مسئلہ ہے؟ میں نے اسے نہیں چرایا؟


طالبہ 2:            اوہ میرے خدا، ہر کوئی کہہ رہا ہے کہ وہ مجھ سے لڑائی کرے گی۔ وہ پاگل لگتی ہے۔


طالبہ 1:   میں اس سے لڑنا نہیں چاہتی۔ آخر کار، میں سکول میں بہت اچھی جا رہی ہوں اور میں اسے خراب نہیں کرنا چاہتی۔


طالبہ 2:  میرا مطلب ہے کہ کیا کسی کو اس طرح دہمکی دینا غیر قانونی نہیں ہے۔


طالبہ 1: یہ ہے مگر شاید اس کی غلط تشریح کی گئی ہے۔ میں اس کے ساتھ لڑنا نہیں چاہتی، میں مشکل میں نہیں پڑنا چاہتی۔ 
میرے اپنی امی کو فون کرتی ہوں اور انہیں بتاتی ہوں کہ وہ ٹیوٹر پر کیا کہہ رہی ہے۔


طالبہ 2 : یہ اچھا خیال ہے۔ انہیں معلوم ہے کہ کیا کرنا چاہیئے۔


طالبہ 1: (فون پر) آداب امی، آپ کو اس لڑکے کے بارے میں پتہ ہے جس کے ساتھ میں پچھلے ہفتے پھر رہی تھی؟ جی ہاں، اس کی پرانی دوست ٹویٹر پر کچھ پاگل پن کی باتیں کر رہی ہے اور میں ابھی بہت ڈری ہوئی ہوں۔ جی ہاں، لیکن ہم پریشان ہیں کہ اگر وہ میرے پیچھے آ گئی یا اس نے کچھ دہمکی آمیز کیا۔ ٹھیک ہے امی، جب ہم سیر کے بعد گھر پہنچیں گے تو آپ کو فون کریں گے۔


طالبہ 2 : اچھا، انہوں نے کیا کہا؟


طالبہ 1: انہوں نے کہا کہ اس کے ساتھ لڑائی مت کرو۔ اور باتوں کے ٹیکسٹ اور ٹیوٹر کے پیغامات کی تصوریریں  
لے لو۔


طالبہ 2 : یہ اچھا خیال ہے۔ اور شاید ہمیں سکول واپس جانے کے بعد اسسٹنٹ پرنسپل کو بھی بتانا چاہیئے۔


طالبہ 1: ہاں، یہ اچھا خیال ہے۔


طالبہ 2 : ایک منٹ، Liz آ رہی ہے۔


طالبہ 1: کیا؟

طالبہ 2 : Liz آ رہی ہے۔


 Liz : تم کیا سمجھتی ہو کہ میرے دوست کو چرا کر تم کیا کر رہی ہو؟ کیا تم نے سنا نہیں کہ پچھلی لڑکی جس نے کوشش کی اس کے ساتھ کیا ہوا؟


طالبہ 1: میں نے تمہارے دوست کو نہیں چرایا۔ تمہاری دوستی ختم ہو گئی تھی۔


Liz : تمہارے لیئے بہتر ہے کہ اس سے دور رہو۔ 


طالبہ 1: سنو، میں ایک لڑکے کیلیئے تم سے لڑائی نہیں کروں گی۔ آخر کار، میں سکول میں بہت اچھی جا رہی ہوں  
اور میں اسے خراب نہیں کرنا چاہتی۔


 Liz : اس کا سکول کے ساتھ کوئی تعلق نہیں ہے۔


طالبہ 2 : حقیقیت میں، اس کا سکول کے ساتھ تعلق ہے۔ اگر آپ سکول سے باہر کسی مشکل میں پڑتے ہیں، پھر بھی آپ کو  
نکالا جا سکتا ہے۔


طالبہ 1: اس لڑکے کے بارے میں اتنا جذباتی ہونے کی ضرورت نہیں۔ ہم تم سے لڑنے نہیں جا رہے۔


طالبہ 2 : کوئی بھی لڑکا اس قابل نہیں کہ اس کیلیئے مشکل میں پڑا جائے۔ اگر تم کسی کو لڑائی کرنے کیلیئے ڈھونڈ رہی ہو تو کہیں اور جاؤ اور ہمیں اکیلا چھوڑ دو۔ 


طالبہ 1: خدا حافظ، چلو۔


ویڈیو 7: تلاش اور ضبطگی


ویڈیو کا مقام: کمرۂ جماعت / منتظم کا دفتر

 Jake: کیسے ہو Tyler، آج کل تم بہت پریشان نظر آ رہے ہو۔ کیا مسئلہ ہے؟

Tyler: ہاں، میں جانتا ہوں۔ مجھے ریاضی کے اس امتحان میں B لینا ہے ورنہ میں فیل ہو جاؤں گا۔ میں گریجویٹ نہیں ہو سکوں گا۔ 
میں پڑھنے کیلیئے ساری رات جاگتا رہا۔

 Jake:  اچھا میرا مطلب ہے کہ میرے پاس ایسی چیز ہے جو تمہیں جاگے رہنے اور پڑھائی میں مدد کرے گی۔ یہ تمہارے ٹیسٹ سکور بھی بڑھا سکتی ہے۔

 Tyler: او ہاں

 Jake: ہاں، دوسرے پریڈ کے بعد مجھے میرے لاکر کے باہر ملو۔


Tyler: ٹھیک ہے۔


طالبہ 3:    ہائے، میں نے سنا ہے کہ Tyler نے کہا کہ تمہارے پاس کوئی چیز ہے جو جاگے رہنے میں مدد کرتی ہے۔


: Jake ہاں، میرے پاس کچھ ہے جو تمہیں جگائے رکھے گی۔ کیوں، کیا تمہیں اس میں دلچسپی ہے؟


طالبہ 3:            ہاں، اپنے کام، گھر کے کام اور کھیل کے ساتھ میں بہت تھک جاتی ہوں۔


 Jake:  ٹھیک ہے، میں لازمی تمہارے لیئے لاؤں گا مگر خاموش رہنا، خاموش رہنا۔ چوتھے پریڈ کے آس پاس مجھے میرے لاکر کے پاس ملنا۔


طالبہ 3: ٹھیک ہے۔


(Mr. Carter کا دفتر)


استانی: Jade ایک اچھا طالبعلم ہے، میری کلاس میں اس کے A آتے ہیں اور ہمیشہ اپنا کام بہت اچھے طریقے سے مکمل کرتا ہے۔


 Mr. Carter:  ٹھیک ہے، میں سمجھ گیا۔ اگر یہ درست ہے تو یہ خودبخود پانچ دن کی معطلی، پرنسپل کی سماعت اور ممکنہ طور پر اخراج ہے۔ اور یہ اس کے کالج کی درخواست کے عمل اور حتی کہ اس کے کیریئر تک کو متاثر کر سکتا ہے۔


استانی: میں جانتی ہوں اور بطور استانی، میں اپنی ذمہ داری سمجھتی ہوں کہ اپنے طلباء کے بہترین مفاد کو ہمیشہ مدنظر رکھوں۔


Mr. Carter: ٹھیک ہے، میں سمجھتا ہوں۔ 


 Mr. Carter:  (فون اٹھاتا ہے) Ms. Jones، کیا آپ Jake Smith کو میرے دفتر لا سکتے ہیں۔ آپ کا شکریہ۔ 


 Mr. Carter:  (استانی کی طرف) شکریہ، میں اس کے والدین کو مطلع کرتا ہوں۔


استانی:    ٹھیک ہے، شکریہ۔

--------

Jake:  امی، ابو، آپ لوگ یہاں کیا کر رہے ہیں؟


 Mr. Carter :Jake، براہ مہربانی تشریف رکھیئے۔


 Jake : اچھا


 Mr. Carter: ہمارے پاس اس بات پر یقین کرنے کی وجہ ہے کہ آپ کے لاکر میں غیر قانونی مواد موجود ہے۔ اس سے پہلے کہ ہم کچھ کریں، کیا آپ کچھ کہنا چاہتے ہیں۔


 Jake : میرا مطلب ہے، شاید صحت مندانہ نہیں مگر غیر قانونی نہیں ہے۔


 Mr. Carter :Jake، ہم آپ کے لاکر کی تلاشی لیں گے۔


والد صاحب: معاف کیجیئے گا، Mr. Carter، یہاں کیا ہو رہا ہے؟


Mr. Carter : محترم اور محترمہ، ہمارے پاس یہ یقین کرنے کی وجہ ہے کہ آپ کے بیٹے کے لاکر میں غیر قانونی مواد ہے۔ ہم 
نے آج صبح دو مخلتف اوقات میں اس کے بارے میں بات کرتے سنا۔


والدہ صاحبہ: یہ ناممکن ہے۔ تم ایسا کچھ نہیں کرو گے، Jake صحیح ہے نا؟


Jake : میرا مطلب ہے کہ میرا جیب خرچ اتنا زیادہ نہیں ہے۔ 


Mr. Carter :Jake، ہم آپ کے لاکر کی تلاشی لیں گے۔ 


والد صاحب: آپ کو ایسا کرنے کا حق نہیں ہے خاص طور پر میری اجازت کے بغیر۔


Mr. Carter : اس طرح کے معاملات میں، جب ہمیں یقین ہو کہ اس کے لاکر میں غیرقانونی مواد ہے تو ہم اس سکول کی سلامتی کو برقرار رکھنے کیلیئے، اس کے لاکر کی تلاشی لے سکتے ہیں اور لیں گے۔


(لاکر کے پاس)


 Jake: میں آپ کو بتا رہا ہوں کہ میرے لاکر میں کچھ نہیں ہے۔


Mr. Carter : تو پھر آپ کو پریشان ہونے کی بالکل ضرورت نہیں ہے۔


بالغ فرد: معاف کیجیئے۔ جناب یہاں کوئی منشیات نہیں ہیں، صرف سوڈا ہے۔


Mr. Carter : ٹھیک ہے، ہم سمجھتے ہیں کہ یہ غیرقانونی نہیں ہیں مگر کیا آپ کو معلوم نہیں ہے کہ آپ کو سکول میں سوڈا بیچنے 
کی اجازت نہیں ہے؟


Jake:  جی ہاں، جناب۔ میں صرف جلد ہی کچھ ڈالر کمانا چاہتا تھا۔


والدہ صاحبہ: میں یہ لے جاتی ہوں۔


والد صاحب: چلو۔ 


ویڈیو 8:  طالبعلم/طالبہ کا لباس اور ظاہری تاثر


ویڈیو کا مقام: سٹیج




Maureen :    ہمممم ۔ ۔ ۔ میں سوچ رہی ہوں کہ میں آج سکول میں کیا پہنوں۔ یہ ٹینک ٹاپ اور لیگینگ یا یہ سادہ قمیض اور جینز۔


بری سوچ: مجھے یہ پسند ہے، یہ زبردست ہے۔


اچھی سوچ:            مجھے یہ پسند ہے، یہ سکول کیلیئے بہتر ہے۔ 


بری سوچ: مجھے یہ پسند ہے، یہ زیادہ پر کشش ہے۔


 Maureen:  یہ ہے۔


اچھی سوچ:           لیکن یہ لباس تمہیں کسی مشکل میں نہیں ڈالے گا۔


بری سوچ: یہ تمہارے جسم کو شکل دے گا۔


اچھی سوچ:            یہ بہتر ہے۔


بری سوچ: تمہاری بہت تعریف ہو گی۔


Maureen : مجھے تعریف پسند ہے۔ میرا خیال ہے کہ میں یہ لباس پہنوں گی۔

----

 Gwentin : اوہ ہو، آج مجھے سکول سے دیر ہو جائے گی۔ میں فیصلہ نہیں کر پا رہا کہ کیا پہنوں۔ میں فیصلہ نہیں کر پا رہا کہ میں اپنی ہوڈی اور خاکی میں کم آرام دہ ہوں گی یا اپنی لٹکتی ہوئی سویٹ پینٹ اور ٹینک ٹاپ میں زیادہ آرام دہ۔


بری سوچ: مجھے یہ پسند ہے، یہ واقعی زبردست ہے۔


Gwentin : یہ درست ہے، یہ [زبردست] ہے۔


اچھی سوچ:           مجھے یہ زیادہ پسند ہے، کیونکہ آج کل اس کا رجحان ہے۔


 Gwentin:  ہمم، یہ درست ہے۔


بری سوچ: بہت سی لڑکیاں تمہاری تعریف کریں گی۔


 Gwentin:  مجھے لڑکیوں کی تعریف پسند ہے۔


اچھی سوچ:             لیکن اس لباس کی وجہ سے تم دوسری لڑکیوں کے سامنے مشکل میں نہیں پڑو گے۔


Gwentin:  اگر لڑکیوں کے سامنے میں مشکل میں پڑا تو شرمندگی ہو گی۔ میں یہ پہنوں گا۔

(طلباء ایک دوسرے سے باتیں کرتے ہوئے)


 Gwentin: ہائے، کیا ہو رہا ہے؟


تین لڑکیاں: آداب!

لڑکی 1: تم بہت اچھے لگ رہے ہو۔


 Gwentin: بہت بہت شکریہ۔


Maureen: میرے بارے میں کیا خیال ہے، کیا میں اچھی نہیں لگ رہی؟


لڑکی 3: تمہاری قمیض میں تمہارا جسم کچھ زیادہ ہی نظر آ رہا ہے۔


لڑکی 2: مجھے یہ بالکل پسند نہیں ہے۔


Maureen: کیوں؟


لڑکی 1: یہ لباس کے قواعد و ضوابط کے مطابق نہیں ہے۔

لڑکی 3: اور یہ تمہاری ٹانگوں پر بہت تنگ ہے۔


 Maureen: (آہ) جو بھی ہے [مجھے پرواہ نہیں]! اب ہمیں کلاس میں جانا چاہیئے۔


 Gwentin : ہاں، ہم دیر سے نہیں جانا چاہتے۔ بعد میں ملتے ہیں۔


لڑکیاں: خدا حافظ، اچھا دن گزرے!

----

 Ms. Va: آپ سب کو صبح بخیر۔


Maureen:           صبح بخیر Ms. Va


Ms. Va: آپ سب آج صبح کیسے ہیں؟


Maureen اور Gwentin:  ہم ٹھیک ہیں۔


 Ms. Va :Maureen میں آپ سے ایک سیکنڈ بات کرنا چاہتی ہوں؟


Maureen           :Gwentin، آپ اپنی جماعت میں جا سکتے ہیں۔


Gwentin:              میں آپ سے بعد میں ملتا ہوں۔


Maureen           :Gwentin کیوں کلاس میں جا سکتا ہے لیکن مجھے رکنا ہے؟


 Ms. Va :Maureen کیا آپ کو معلوم ہے کہ آپ نے آج کیا پہنا ہے؟


 Maureen:            ہاں، کیا میں اچھی نہیں لگ رہی؟


 Ms. Va: مجھے ڈر ہے آپ کا لباس ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کر رہا ہے۔


Maureen:            کیسے؟


 Ms. Va: ٹینک ٹاپ اور لیگنگ کی سختی سے ممانعت ہے۔


 Maureen :            لیکن میں اچھی لگ رہی ہوں۔


 Ms. Va: آپ کو اپنے کپڑے تبدیل کرنے ہوں گے۔


Maureen:             ٹھیک ہے۔


Ms. Va: یہاں انتظار کیجیئے، میں ابھی واپس آتی ہوں ۔ ۔ ۔ یہ لو۔


Maureen:               (آہ) لیکن یہ بہت خراب ہیں!


 Ms. Va:            خیر، اگلی دفعہ آپ بہتر فیصلہ کرنا۔


Maureen:               (آہ) ٹھیک ہے، بہت بہتر Ms. Va


استانی:                      آپ کا  شکریہ

----

Maureen:              اگلی دفعہ میں لباس کے قواعد و ضوابط پر چلوں گی کیونکہ میں یہ خراب کپڑے دوبارہ نہیں پہننا چاہتی۔ (آہ)


ویڈیو 9: غارت گری


ویڈیو کا مقام: آڈیٹوریم


طلباء:            آداب !Ashley


 Ashley: آداب، تم سب یہاں کیا کر رہے ہو؟


طالبہ 1:             بس آوارہ گردی۔ اور تم کیا کر رہی ہو؟


Ashley: میں یہاں ڈرامے کیلیئے ہوں۔ میرا خیال ہے کہ تم لوگ یہاں نہیں ہو سکتے۔


طالبہ 1:    اچھا، کیوں نہیں؟


 Ashley: کیونکہ تمہارے پاس اجازت نہیں ہے۔ تم یہاں ڈرامے کیلیئے نہیں ہو۔ 


طالبہ 1:    تو ہم سینئر ہیں، ہم جو چاہتے ہیں وہ کرتے ہیں۔


Ashley: نہیں، تم نہیں کر سکتے۔


بیان کرنے والی: کیا آپ یہاں کوئی مسئلہ دیکھتے ہیں؟


(استاد اندر داخل ہوتا ہے)


طلباء:           آداب Mr. Rolong، آپ کیسے ہیں؟


Mr. Rolong: ٹھیک، آپ لوگ کیسے ہیں؟


طلباء:           ہم ٹھیک ہیں۔ ٹھیک ہے۔


 Mr. Rolong: آپ دونوں یہاں کیا کر رہے ہیں؟


طالبہ 1:    بس آوارہ گردی۔


Mr. Rolong: بس آوارہ گردی۔ آپ لوگ یہاں آوارہ گردی کرنے آئے ہیں۔ کیا آپ لوگ یہاں ڈرامے کیلیئے آئے ہیں؟


طلباء:            نہیں۔


 Mr. Rolong: تو پھر ہمیں میرے دفتر میں جا کر بات کرنا ہو گی۔


بیان کرنے والی: یہ بات ضابطہ اخلاق کے خلاف ہے کہ طلباء سکول اوقات کے بعد سکول املاک پر اجازت کے بغیر موجود ہوں۔


(سکول کے باہر)


طالبعلم/طالبہ: کسی کو مجھے بتانے کی ضرورت نہیں کہ میں کیا کر سکتا ہوں۔ میں سینئر ہوں۔ میں جو چاہوں کر سکتا ہوں۔


: Mr. Rolong ارے، ارے، ارے! آپ کیا کر رہے ہیں؟ یہ غارت گری ہے اور یہ جرم ہے۔


طالبعلم/طالبہ 1: نہیں، یہ فن ہے۔

بیان کرنے والی: غارت گری، ضابطہ اخلاق کے خلاف ہے۔  سکول نقصان کی قیمت کو پورا کرنے کیلیئے قانونی چارہ گوئی کر سکتا ہے۔



ویڈیو 10: ہتھیار


ویڈیو کا مقام: پارکنگ لاٹ/سکول


طالبعلم/طالبہ 1: ارے نہیں، ابو اپنی بندوق گاڑی کے اندر بھول گئے۔


طالبعلم/طالبہ 2: ہم کیا کریں؟


طالبعلم/طالبہ 1: صرف کسی کو مت بتاؤ۔ چلو صرف دن گزار لو، ٹھیک ہے۔


طالبعلم/طالبہ 2 2: کیا تمہیں یقین ہے؟


طالبعلم/طالبہ 2: کسی کو مت بتاؤ۔


طالبعلم/طالبہ 1: ٹھیک ہے۔


(سکول کا ہال)


طالبعلم/طالبہ 2: Alyssa، میرے ابو اپنی بندوق میرے بھائی کی گاڑی میں بھول گئے۔


 Alyssa:  اوہ میرے خدا، کیا تم نے کسی کو بتایا؟


طالبعلم/طالبہ 2: نہیں، میں نے وعدہ کیا ہے کہ میں نہیں بتاؤ گی۔ 


 Alyssa : ہمیں کلاس میں جانا چاہیے ورنہ ہمیں دیر ہو جائے گی۔


طالبعلم/طالبہ 2: ٹھیک ہے۔


(دفتر)


منتظم: کیا آپ لوگ جانتے ہیں کہ آپ کو آج یہاں کیوں بلایا گیا ہے؟ 


طالبعلم/طالبہ 1: نہیں، نہیں میں نہیں جانتا۔


منتظم: مجھے یہ بتایا گیا ہے کہ آپ کی گاڑی میں ہتھیار موجود ہے۔


طالبعلم/طالبہ 1: تم نے کس کو بتایا؟


طالبعلم/طالبہ 2:  میں نے صرف Alyssa کو بتایا تھا، اس نے وعدہ کیا کہ وہ کسی کو نہیں بتائے گی۔


طالبعلم/طالبہ 1: (آہ)


منتظم: اس کے باوجود، اگر آپ کے پاس ہتھیار ہے تو مناسب چیز یہ ہے کہ آپ سکول انتظامیہ کو بتاتے۔ آپ لوگوں کو نکالا جا سکتا ہے۔


طالبعلم/طالبہ 1: یہ صرف میرے والد صاحب کی شکار کرنے والی رائفل ہے۔ انہوں نے غلطی سے اسے وہاں چھوڑ دیا۔


طالبعلم/طالبہ 2: ہاں، یہ ہماری نہیں ہے۔ وہ اسے بھول گئے۔


منتظم: میں افسر  Davis کو آپ کی گاڑی کی تلاشی لینے کیلیئے بھیج رہی ہوں۔


افسر Davis: اس سے پہلے میں آپ کی گاڑی کی تلاشی لوں، کیا آپ کچھ کہنا چاہتے ہیں؟


طالبعلم/طالبہ 1: جی نہیں


افسر Davis: ٹھیک ہے۔


ویڈیو 11: غلطیوں والی ریل [ویڈیو]


ویڈیو کا مقام: مختلف مقامات


(مقام: گاڑی میں)


والدہ صاحبہ: تم اس طرح کے گریڈ لے کر کبھی اچھے کالج میں نہیں جا سکتے۔


طالبعلم/طالبہ: والدہ صاحبہ:


(ہنستے ہوئے)


ڈائریکٹر: کٹ!


(مقام: لاکر روم میں)


طالبعلم/طالبہ: ٹھیک ہے، اپنا جسم سیدھا کرو! تمہیں لیگ ڈے کے بارے میں سنحیدہ ہونا ہے!


(ہنستے ہوئے)


طالبعلم/طالبہ: یہ زیادہ سنجیدہ ہے!


(ہنستے ہوئے)

----

طالبعلم/طالبہ: اب، تم یہاں سے نکل جاؤ!


Ryan: ٹھیک ہے، او میرے خدا، میں سمجھ گیا۔


(مقام: ہال میں)


ڈائریکٹر: 3، 2، 1 کے بعد


طالبعلم/طالبہ 1: تمہارے پاس ابھی بھی پاٹ [بھنگ کی کسی قسم کا ایک نام] ہے۔


طالبعلم/طالبہ 2: او ہاں


تمام: (ہنستے ہوئے)


طالبعلم/طالبہ 2: چلو بھی، یار!


(مقام: باہر)

ڈائریکٹر: ایکشن

(مقام: سٹیج پر)


ڈائریکٹر: 3   ،2 ، 1


Maureen:  (آہ) اگلی دفعہ میں ۔۔۔ میں صرف ۔۔۔(ہنستے ہوئے)

(مقام: دفتر میں)


 Mr. Carter :Jake، ہم آپ کے لاکر کی تلاشی لیں گے۔


والد صاحب: معاف کیجیئے گا، Mr. Carter، یہاں کیا ہو رہا ہے؟


Mr. Carter:  محترمہ اور محترم، ہمارے پاس اس بات پر یقین کرنے کی وجہ ہے کہ آپ کے بیٹے ۔ ۔ ۔ 


والدہ صاحبہ: معاف کیجیئے، میں روکنے جا رہی ہوں ۔۔۔ وہ ۔۔ اوووہہہہہ!!


(مقام: کمرۂ جماعت میں)


ڈائریکٹر: ایکشن!


 Dejah:  معافی چاہتی ہوں Ms. Red، مجھے اپن فون باہر نہیں نکالنا چاہیئے تھا۔ مجھے امید ہے کہ دن کے اختتام پر مجھے اپنا فون واپس مل 
جائے گا۔


 Ms. Red:  مجھے خوش ہے کہ آپ سمجھ گئی، لیکن ہاں، آپ کو یہ دن کے اختتام پر واپس مل جائے گا۔ آپ کا  شکریہ۔


طالبعلم/طالبہ 1: زبردست Dejah ۔ ۔ ۔ ۔ ۔


ڈائریکٹر: رکو


طالبعلم/طالبہ 1: ۔ ۔ ۔ ۔ ٹھیک ہے


ڈائریکٹر: یہاں کچھ تیز ہے۔


 Dejah:  وہ لگتی ہے، زبردست DEJAH!

تمام: (ہنستے ہوئے)

ڈائریکٹر: تم بہت اچھا کر رہے ہو!

----

 Dejah:  معافی چاہتی ہوں Ms. Red، مجھے اپن فون باہر نہیں نکالنا چاہیئے تھا۔ مجھے امید ہے کہ دن کے اختتام پر مجھے اپنا فون واپس مل


Ms. Red : مجھے خوشی کہ آپ سمجھ گئی۔ اس لیئے، شکریہ،لیکن ہاں، آپ کو یہ دن کے اختتام پر واپس مل جائے گا۔


 Dejah : شکریہ۔


طالبعلم/طالبہ 1: زبردست، Dejah، تم نے زبردست کیا!


طالبعلم/طالبہ 2: ہاں، زبردست۔


 Dejah:  آپ کس بارے میں بات کر رہے ہیں؟ تم کون ہو؟ (ہنستے ہوئے)


ڈائریکٹر: ٹھیک ہے، وہ نرمی کہاں ہے جو ابھی تھی؟


Dejah:  میں معافی چاہتی ہوں۔ (ہنستے ہوئے)


کیمرے کے پیچھے آواز: کیا تم نے ابھی خراٹا لیا؟


 Dejah:  ہاں، جب میں ہنستی ہوں تو لیتی ہوں۔ معافی چاہتی ہوں۔


کیمرے کے پیچھے آواز: (خنزیر کی طرح خراٹے کی آواز نکالتے ہوئے)


تمام: (ہنستے ہوئے)


ڈائریکٹر: ٹھیک ہے، تیار ہیں؟


(مقام: چائے کیلیئے باہر)


طالبعلم/طالبہ 2: اگر آپ سکول سے باہر کسی مشکل میں پڑتے ہیں، پھر بھی آپ کو سکول سے نکالا جا سکتا ہے۔


طالبعلم/طالبہ 1: جی ہاں، اس لیئے آئیے۔ اس لڑکے کے بارے میں اتنا جذباتی ہونے کی ضرورت نہیں۔ ہم تم سے لڑنے نہیں جا رہے۔


طالبعلم/طالبہ 2: کوئی بھی لڑکا اس قابل نہیں کہ اس کیلیئے مشکل میں پڑا جائے۔ اگر تم لڑائی کرنا چاہتی ہو تو کہیں اور جاؤ اور ہمیں اکیلا چھوڑ دو۔ چلو، چلیں۔


طالبعلم/طالبہ 1: ہاں، خدا حافظ۔


 Liz : تم لوگ اپنے فون بھول گئیں۔ 


ڈائریکٹر: چلو دوبارہ کوشش کرتے ہیں۔


تمام: (ہنستے ہوئے)


 Liz : میں نے کوشش کی۔ میں نے کوشش کی۔


(مقام: پارکنگ لاٹ میں)


طالبعلم/طالبہ 1: ارے نہیں، ابو اپنی شکار والی بندوق گاڑی کے اندر بھول گئے۔


طالبعلم/طالبہ 2: ارے نہیں، ہم کیا کریں؟


طالبعلم/طالبہ 1: کسی کو مت بتاؤ۔ چلو صرف دن گزار لو۔ ٹھیک ہے؟


طالبعلم/طالبہ 2: کیا تمہیں یقین ہے؟


طالبعلم/طالبہ 1: ہاں، کسی کو مت بتاؤ۔


طالبعلم/طالبہ 2: ٹھیک ہے۔


(گاڑی کی ڈگی بند کرتے ہوئے ہنس رہے ہیں)


ڈائریکٹر: کٹ! غلطیاں! دوبارہ کوشش کریں! (ہنستے ہوئے)

(مقام: کیفے ٹیریا میں)


طالبعلم/طالبہ 2: نہیں، سکول اس کا ہرجانہ دے گا۔ یہ میری غلطی نہیں۔


طالبعلم/طالبہ 1: معافی چاہتا ہوں، مگر اصولی طور پر سکول اس کیلیئے ادا نہیں کر سکتا کیونکہ وہ ذمہ دار نہیں ہیں اور تم اپنا لیپ ٹاپ اپنی ذمہ داری پر سکول لائے۔ لیکن، میرا مطلب ہے کہ اس کا مثبت پہلو دیکھو۔ مفت نیچوس، کیا میں ٹھیک کہہ رہا ہوں؟ 


طالبعلم/طالبہ 2: وہ بدمزہ ہے۔


طالبعلم/طالبہ 1: میرے لیئے کچھ اور۔


طالبعلم/طالبہ 2: (آہ)


لڑکیاں پیچھے سے: اوہ! لڑکو ۔ ۔ ۔ ۔ 


ڈائریکٹر: کٹ، کٹ، کٹ۔


تمام: (ہنستے ہوئے)


----

طالبعلم/طالبہ 2: وہ بدمزہ ہے۔


طالبعلم/طالبہ 1: میرے لیئے کچھ اور۔


لڑکیاں پیچھے سے: نیچوس!!!!


ڈائریکٹر: اور کٹ! زبردست لڑکو!


----

طالبعلم/طالبہ 1: تم سکول میں لیپ ٹاپ اپنی ذمہ داری پر لائے۔ لیکن، اس کا مثبت پہلو دیکھو۔ مفت نیچوس، کیا میں ٹھیک کہہ رہا ہوں؟


طالبعلم/طالبہ 2: وہ بدمزہ ہے۔


طالبعلم/طالبہ 1: ارے، میرے لیئے کچھ اور۔


لڑکیاں پیچھے سے: نیچوس!!!!