PWCS کے مڈل سکول کے ضابطۂ اخلاق کے ویڈیو سکرپٹ


یہ 2016 کے مڈل سکول کے ضابطۂ اخلاق کی ویڈیو کے ٹکروں کی نقل ہے جو http://pwcs.ss9.sharpschool.com/cms/One.aspx?portalId=340225&pageId=789928 پر دﺳﺗﻳﺎﺏ ہے۔ 


ویڈیو 1: اپنے اعمال پر غور کیجیئے - تعارف


ویڈیو کا مقام: سکول کی سیڑھیاں/ہال وے


طالبہ 1 :            ضابطۂ اخلاق 57 صفحے لمبا ہے۔ یہ پڑھنے کیلیئے بہت زیادہ ہے۔

طالبعلم 3 : ہاں، میرے پاس 16 سے 18 تک صفحات نہیں ہیں اور میں ان کے بارے میں بالکل نہیں جانتا۔ تم کیا کہتے ہو کہ  کلاس میں تیاری کے ساتھ شریک نہ ہونے کی پرانی عادت بھی ضابطۂ اخلاق میں شامل ہے؟


طالبہ 2 :    جی ہاں، یہ غنڈہ گردی اور دوسروں کی طرف تمہارے طرز عمل کے درمیان موجود ہے۔


طالبعلم 3 :  آپ کو کیسے پتہ ہے؟


طالبعلم 2 : مجھے میرا تمام ضابطۂ اخلاق معلوم ہے۔


طالبہ 1 :  ہمیں ضابطۂ اخلاق کی ضرورت ہی کیوں ہے؟


Dr. Walts: کیا میں نے کسی کو ضابطۂ اخلاق کہتے سنا؟


تمام طلباء: Dr. Walts


Dr. Walts: اسلام و علیکم طلباء


طالبہ 2:    Dr. Walts، آپ یہاں Nokesville سکول میں کیسے؟


Dr. Walts: خیر، مجھے لگا کہ مڈل سکول کے طلباء ضابطۂ اخلاق کے بارے میں بات کر رہے ہیں، تو میں جتنا جلدی آ سکتا تھا، آ گیا۔


طالبعلم 3 : ویسے ہم نے ابھی بات کرنا شروع کی تھی جیسے 10سیکنڈ پہلے!


Dr. Walts: مجھے پتہ ہے، میں اس سے بھی جلدی آتا تھا ۔۔۔تو، آپ پوچھ رہے تھے کہ ہمیں ضابطۂ اخلاق کی ضرورت ہی کیوں ہے؟


طالبہ 1:             امممممم۔۔۔نہیں۔


Dr. Walts: خیر، یہ ایک اچھا سوال ہے۔ یہ اس لیئے ہے تاکہ ہر کوئی سمجھ سکے کہ آپ لوگوں سے کیا متوقع ہے جب آپ 
سکول میں ہیں۔ اصول ہمیں محفوظ رکھنے اور سیکھنے کیلیئے تیار کرنے میں مدد کرتے ہیں۔ 


طالبعلم 3 : کیا یہ اصول سکول کی کھیلوں کی تقریبات پر بھی لاگو ہوتے ہیں؟


طالبہ 2 :  جی ہاں


طالبہ 1 :  فیلڈ ٹرپس؟


طالبہ 2 :            جی ہاں


طالبعلم 3 : بس؟


طالبہ 2 :  جی ہاں


طالبہ 1 :            بس۔۔۔


طالبہ 2 : او ہاں


طالبہ 1 : صبر، مجھے ختم کرنے دو۔۔۔سٹاپ


طالبہ 2 : جی ہاں


طالبعلم 3 : تو تقریبا ہر وہ چیز جس میں سکول شامل ہے؟


Dr. Walts: آپ صحیح سمجھے!


طالبہ 1 : اور یہ ہم مڈل سکولرز پر یہاں Nokesville سکول میں بھی لاگو ہوتا ہے؟


Dr. Walts: جی ہاں، یہ پرنس ولیئم کاونٹی پبلک سکولز میں ہر مڈل سکول کے طالبعلم/طالبہ پر لاگو ہوتا ہے۔


طالبہ 1 : یہ پڑھنے کیلیئے بہت زیادہ ہے۔


Hayden: ضابطۂ اخلاق کے بارے میں بات کر رہے ہیں، آ؟ (مڑتا ہے۔۔۔) اوہ، آداب Dr. Walts۔


Dr. Walts: آداب Hayden، آپ کو دیکھ کر خوشی ہوئی۔


طالبہ 2 : ہم ابھی ضابطۂ اخلاق کے بارے میں بات کر رہے تھے اور صرف 10 سیکنڈ کے بعد یہ نہ جانے کہاں سے 
آ گئے۔


Hayden: 10 سیکنڈ؟ آپ سست ہو رہے ہیں۔


Dr. Walts: خیر، ارے یہ ایک بڑا سکول ہے۔ میں جتنی جلدی یہاں آ سکتا تھا، آیا۔ تو، کیا ضابطۂ اخلاق کے بارے میں آپ کے  
کوئی اور سوالات ہیں؟


Hayden: میں نے سنا ہے کہ ہائی سکول نے ضابطۂ اخلاق کے بارے میں ویڈیو بنائی ہے۔


طالبہ 2 : انہوں نے بنائی ہے، میں نے اپنے فون پر دیکھی ہے۔ زبردست ہے۔


طالبہ 1 : میرے پاس ایک تجویز ہے۔ مڈل سکول کے طلباء کو خود اپنی ایک ویڈیو بنانی چاہیئے۔ مڈل سکول کے ذریعے۔۔۔


ہر ایک:            مڈل سکول کیلیئے!


طالبہ 1 : اوہ، آپ کو پتہ ہے کہ میں یہی کہنے جا رہی تھی۔


Hayden: ظاہر ہے۔


Dr. Walts: میرا خیال ہے کہ یہ ایک زبردست تجویز ہے۔


طالبعلم 3 : ہم اس کیلیئے کیا کر سکتے ہیں؟


Hayden: ایک تعارف کے بارے میں کیا خیال ہے؟ ہم کہہ سکتے ہیں کہ ہم یہ ویڈیو کیوں بنا رہے ہیں۔


طالبہ 1 : میرا خیال ہے کہ ہم نے ابھی ابھی کیا۔ اب New Dominion میں ہمارے دوستوں کیلیئے۔


Dr. Walts: ہمیں امید ہے کہ آپ کو ہمارے مڈل سکول کے ضابطۂ اخلاق کی عالمی معیار کی پیشکش پسند آئے گی۔
--------


(کمرۂ جماعت)


Mr. Lint: نئے تعلیمی سال میں آپ کو خوش آمدید! تمام طلباء پاس پاس آ جائیں۔ چلیں پرنس ولیئم کاؤنٹی سکولز کے ضابطۂ اخلاق کے بارے میں کچھ اور سیکھتے ہیں۔


طالبہ 1 : ضابطۂ اخلاق؟ ضابطۂ اخلاق کیا ہے؟


طالبعلم 2 : کیا یہ بتاتا ہے کہ اساتذہ کا احترام کیسے کرنا ہے؟


طالبعلم 3 : کیا یہ طلباء کو ان اصول اور ضوابط کے بارے میں بتاتا ہے جن کی ان کو پیروی کرنی چاہیئے؟


استاد: ضابطۂ اخلاق اصولوں اور ضوابط کی وضاحت کر کے، ہمیں آپ کو عالمی معیار کی تعلیم دینے میں مدد کرتا ہے


طالبہ 4 : اوہ میں سمجھ گئی، ضابطۂ اخلاق طلباء، عملے اور اساتذہ کیلیئے ہے۔ یہ اس لیئے تاکہ ہر کوئی محفوظ ہو اور ہمیں جس تعلیم کی ضرورت ہے اسے حاصل کر سکیں۔


طالبعلم 5 : یہ ایک طرح سے سکول کے اصولوں اور ضوابط کا خاکہ ہے۔


طالبعلم 6: ہاں، اور یہ ہمیں زیادہ مثبت اور خیال رکھنے والے طلباء بنانے میں مدد کرے گا،


Mr. Lint: آپ کیسے ہیں جناب؟


Mr. Bixby: Mr. Lint، آپ کو دیکھ کر خوشی ہوئی جناب۔ ہر ایک کو آداب! آپ سب آج کیسے ہیں؟


طلباء:            آداب Mr. Bixby:


Mr. Lint: اس ویڈیو میں ہم آپ کو تمام طلباء کی ذمہ داریوں کو سمجھنے میں مدد کریں گے۔


طالبہ: ہم ماضی کی کامیابی اور ضابطۂ اخلاق پر ثابت قدم رہ کر کیسے بلندی حاصل کر سکتے ہیں، اس کے بارے میں بات کریں گے۔


Mr. Bixby: اور ہمارا پرنس ولیئم کاونٹی کا ضابطۂ اخلاق ہم میں سے ہر ایک کیلیئے، سٹاف کے عملے اور طالبعلم/طالبہ اور والدین کو یہ سمجھنے میں مدد کیلیئے زبردست ہے کہ ہم سب کی سکول کو سیکھنے کیلیئے ایک مثبت جگہ بنانے سے متعلق کیا امیدیں ہیں؟


طلباء:        ہمیں امید ہے کہ آپ باقی کی ویڈیو سے لطف اندوز ہوں گے۔


ویڈیو 2: غنڈہ گردی


ویڈیو کا مقام: کمرۂ جماعت اور سکول میں مختلف مقامات

طالبعلم 1 : آج کا اہم عنوان غنڈہ گردی ہے۔ ارے، ادھر آؤ، ادھر آؤ۔ غنڈہ گردی کیا ہے؟


طالبہ 2 : کوئی بھی جارحانہ یا ناپسندیدہ رویہ جو نقصان پہنچانے یا شرمندہ کرنے کے  ارادے سے کیا جائے۔


طالبہ 3 :  اور اسے دہرایا جائے۔


طالبہ 3 :  اوہ ہاں، اسے دہرایا جاتا ہے۔

------------------

(طلباء کا گروپ)


رپورٹر:            غنڈہ گردی کی کچھ مثالیں کون سی ہیں؟


لڑکی 1 : لڑکی، براہ مہربانی!


لڑکا 1 :    یہ لوگوں کے جذبات کو ٹھیس پہنچانے کیلیئے ان کا مذاق اڑانا ہو سکتا ہے۔


لڑکی 2 : کیا؟


لڑکی 3 : ہا! آپ کو پتہ نہیں۔


لڑکی 4 : اس کا یہ مطلب ہو سکتا ہے کہ لوگوں کو بار بار پیغامات بھیجے جائیں۔


لڑکی 5  : آ، مجھے معلوم ہے جب بچوں کو۔۔۔


لڑکی 5: کہیں جانے کی اجازت نہیں۔۔۔

--------

سکرین کے الفاظ:


غنڈہ گردی کہاں ہو سکتی ہے؟


ہال وے، کمرۂ جماعت، جم، لاکر روم میں، بس پر اور حتی کہ باہر۔

_______

لڑکی رپورٹر: ہمارے گیم شو میں آپ کو دوبارہ خوش آمدید۔ اور ہمارا اگلا سوال ہے: سائبر [کمپیوٹر اور انٹرنیٹ سے متعلق] غنڈہ گردی کیا ہے؟ اور Zach یہاں ہے۔


Zach: سائیبر غنڈہ گردی، غنڈہ گردی کی کوئی بھی قسم ہو سکتی ہے جو طالبعلم/طالبہ یا عملہ پر اثرانداز ہو۔ بشمول تصاویر، خاکے، ویڈیوز اور گھٹیا پیغامات۔ 

لڑکی: شکریہ Zach۔ اور ہمارا اگلا کلپ دکھائے گا کہ اگر آپ سائبر غنڈہ گردی دیکھیں تو کیا کریں؟

--------

(ہال وے)


طالبعلم 1 : اوہ یار، یہ پاگل پن ہے۔


طالبہ 2 : ہمیں اس کے بارے میں کسی کو بتانا چاہیئے۔


طالبعلم 1 : ہاں، ہمیں بتانا چاہیئے۔


طالبہ 2 : پہلے ہم اس کی تصویر لیتے ہیں اور پھر کسی بڑے کو بتاتے ہیں۔


طالبعلم 1 : ہاں چلو کسی بالغ کو بتاتے ہیں۔

--------

تمام طلباء: غنڈہ گردی کی رپورٹ کیسے کریں۔۔۔(تمام کمپیوٹر سکرین کی طرف اشارہ کرتے ہیں)


طالبہ 4 : آپ بھی یہ کر سکتے ہیں۔۔۔


طالبہ 3 :            اپنے استاد/استانی یا کونسلر کو بتائیے۔


طالبعلم 2 : اپنے والد والدہ یا کسی دوسرے بالغ کو بتائیے جس پر آپ اعتماد کرتے ہیں۔


طالبعلم 1 : یا آپ غنڈہ گردی پرمنبی ایک فارم جمع کرا سکتے ہیں۔

--------
طالبہ 1 : آپ غنڈہ گردی کو بچانے کیلیئے کیا کر رہے ہیں؟ 


طالبہ 2 : (ہسپانوی زبان میں) آپ غنڈہ گردی کو بچانے کیلیئے کیا کر رہے ہیں؟

ویڈیو 3: نافرمانی، بدتمیزی، خلل انگیزی


ویڈیو کا مقام: کمرۂ جماعت 


Mr. Hixon: اچھا، یاد رہے، آپ کے پاس اپنی ابتدائی مشق کو مکمل کرنے کیلیئے 12 منٹ ہیں۔ آپ اپنے کام مکمل کرنے کے لیئے اپنے سامنے موجود نوٹس، کتاب یا کوئی اور اسائنمنٹ استمعال کر سکتے ہیں۔ آپ کے پاس 12 منٹ ہیں۔


(طالبہ پنسل ڈیسک پر بجاتے ہوئے)


Mr. Hixon: Grace،میں چاہتا ہوں کہ آپ کھٹ کھٹ کرنا بند کریں، سمجھی؟


لڑکیاں: (ہنستے ہوئے)


Mr. Hixon: یاد رہے، آپ کے پاس اپنی ابتدائی مشق کو مکمل کرنے کیلیئے 10 منٹ ہیں۔ لڑکیو، براہ مہربانی خاموش رہو اور کام پر توجہ دو، سمجھی؟ آپ کا  شکریہ۔


(طالبات پنسل ڈیسک پر بجاتے ہوئے)

لڑکا: Mr. Hixon، براہ مہربانی کیا آپ انہیں خاموش کروا سکتے ہیں؟ اور ہم یہاں تعلیم حاصل کرنے آئے ہیں۔


لڑکی: میں توجہ نہیں دے پا رہی۔


Mr. Hixon: Katie، Grace، براہ مہربانی باہر چلو، ہمیں ہال میں بات کرنی ہے۔ 


کلاس: اووووووووو۔۔


Mr. Hixon: اچھا لڑکیو، آپ کے یہاں باہر رہنے کی وجہ یہ ہے کہ میں نے آپ کو دو مرتبہ اپنی کلاس میں خلل ڈالنے سے روکا 
کیونکہ باقی طلباء تعلیم حاصل کرنا چاہتے ہیں۔ اب ہم واپس اندر جائیں گے اور ہمیں اپنا کام مکمل کرنا ہے۔


Grace: مجھے اس جماعت سے نفرت ہے۔


Katie :    Mr. Hixon میں معافی چاہتی ہوں، کیا میں واپس جا کر اپنا کام کر سکتی ہوں؟


Mr. Hixon: ہاں، Katie واپس جاؤ۔ Grace، آپ کو اور مجھے بات کرنا ہے۔


لڑکی 1 : وہ آرام سے استاد کی بات کیوں نہیں سن سکتیں؟


لڑکی 2 : ہاں، تعلیمی ماحول میں خلل ڈالنا اصول کے خلاف ہے۔


طلباء:            بالکل، ٹھیک۔


لڑکی 3 : ہاں، استاد/استانی کی بات نہ سننا خلاف ورزی ہے۔


ویڈیو 4: لڑائی جھگڑا


ویڈیو کا مقام: ہال میں لاکرز کے پاس/غسل خانے/دفتر


طالبہ 1 : کیا آپ نے گزشتہ رات ریاضی کا کام کیا؟


طالبعلم 2 : ہاں، میں نے ریاضی کا کام کیا۔


طالبہ 1 : کیا آپ کو کوئی مشکل پیش آئی؟


طالبعلم 2 : ہاں، آخری عدم مساوات وال حصہ، ہاں معلوم ہے۔


طالبعلم 3:           ہال کی طرف آتا ہے اور (طالبعلم 2 سے ٹکراتا ہے)


طالبعلم 2 : اے، تم نے یہ کیوں کیا؟


طالبعلم 3 : میں تو ایسے ہی اِدھر اُدھر کھیل رہا ہوں۔


طالبہ 1 : میرا خیال نہیں کہ تم میرے اردگرد کھیلو۔


طالبعلم 3 : تم کیا کرو گے؟ مجھ سے لڑو گے؟


طالبعلم 2 : ہاں، میں تم سے لڑو گا!


طالبہ 1 : ٹھیک ہے، ہم دونوں وہاں ہوں گے۔


طالبعلم 3 : ٹھیک ہے، آج سکول کے بعد۔ 

----

لڑکی 1 : کیا آپ نے وہ سنا؟


لڑکی 2 : ہاں، وہ لڑنے جا رہے ہیں۔ کیا آپ جا کر دیکھنا چاہتی ہو؟


لڑکی 1 : نہیں، ہمیں کسی بڑے کو بتانا چاہیئے۔


لڑکی 2 : شاید، تم ٹھیک کہہ رہی ہو۔ میرے پاس ایک تجویز ہے۔


(طلباء کلاس میں کام کر رہے ہیں اور لڑائی کیلیئے تیار ہو رہے ہیں) موسیقی بج رہی ہے 


(لڑکے غسل خانے سے نکل رہے ہیں)


طالبہ 2 : میں نے ویڈیو گیمز کھیلیں۔


طالبعلم 1 : میں نے سپرمین بمقابلہ بیٹ مین دیکھا۔


طالبعلم 3 : تم دونوں دوبارہ۔


طالبعلم 1 : آؤ یہ کریں، آؤ لڑیں!


لڑکی 2 : لڑو، لڑو، لڑو، اس کے منہ پر مارو!


لڑکی 1 : Ms. Taylor ، Ms. Taylor


استانی:            لڑکو رکو، ایک دوسرے کو چھوڑو۔  ہم یہاں Lake Ridge میں اس طرح کی حرکتیں نہیں کرتے۔ تم لوگ ایک قطار بناؤ 
اور ابھی میرے دفتر میں جاؤ!
--------
(دفتر میں)


استانی: لڑکو، میں پچھلے ہفتے بہت مایوس ہوئی جب مجھے اس لڑائی کی وجہ سے مداخلت کرنا پڑی اور بدقسمتی سے اس واقعے کی وجہ سے آپ لوگوں کو معطل کیا جا رہا ہے۔ میں نے ویڈیوز کا جائزہ لیا اور طلباء سے ان کے بیانات لیئے اور ہو سکتا ہے کہ آپ کو پرنس ولیئم کاونٹی سے نکال دیا جائے۔ 


طالبہ 1 : میری امی مجھے جان سے مار دیں گی۔ ہمیں دوسری کاؤنٹی میں منتقل ہونا پڑے گا۔ 


طالبعلم 2 : ایسا کیوں ہوا؟

--------

استانی: صبح بخیر لڑکیو۔ آپ لوگوں نے پچھلے ہفتے ہونے والی لڑائی کے بارے میں مجھے بتا کر بہت اچھا کام کیا۔ تاہم، اگر آپ لوگ پہلے ہی فیصلہ کرنے کی بجائے میرے پاس آتیں تو اس سب کو ہونے سے بچایا جا سکتا تھا۔ کیا آپ کو معلوم ہے کہ تماشائی کے طور پر کھڑے رہنے سے بھی آپ مشکل میں پڑ سکتے ہو۔ اگلی دفعہ، براہ مہربانی کسی بالغ فرد یعنی استاد/استانی، سکول کونسلر یا انتظامیہ کے کسی دوسرے فرد کو فوری طور پر مطلع کریں۔ ہم یہاں مدد کیلیئے موجود ہیں۔ 


لڑکی 1 : ہمیں یہ بتانے کیلیئے شکریہ۔ 


لڑکی 2 : ہاں، نصیحت کیلیئے شکریہ، ہم معافی چاہتے ہیں۔

--------

نیا منظر
(باہر)


لڑکی 1 : ارے، کیا تم ہفتے کو میری پارٹی میں آ رہی ہو؟


لڑکی 2 : نہیں، میری سوکر کی مشق ہے۔ 


لڑکی 1 : او میرے خدا۔ او میرے خدا، Stephanie کا ایک اور دوست 


لڑکی 2 : اوہ، واؤ!


لڑکی 1 : اسے snap chat پر ڈالو۔

--------
(لائبریری میں)


لڑکی 1 : کیا تم نے سنا کہ Stephanie اور Edward آپس میں ملاقاتیں کر رہے ہیں؟ 

لڑکی 3 : او میرے خدا، واقعی؟ لگتا ہے اس سال میں یہ اس کا پانچواں دوست ہے؟


لڑکی 4 : واؤ، دوبارہ؟


لڑکی 2 : او ہاں، دیکھو یہ میری snap chat کہانی پر تھا۔


لڑکی 5 : واقعی؟ آخری دفعہ کب اس نے کسی لڑکے سے ایک مہینے سے زیادہ دوستی کی؟


تمام لڑکیاں: مجھے معلوم ہے!


لڑکی 6 : میرا خیال ہے کہ اسے اپنے جذبات قابو میں رکھنے چاہیئے۔


تمام لڑکیاں: اسے ایسا کرنا چاہیئے!


لڑکی 7 : ارے سنو، اس کی سماجی زندگی سے تم میں سے کسی کا بھی کوئی تعلق نہیں ہے۔ 


لڑکی 1 : تم کون ہو؟


لڑکی 7: واقعی؟

--------
(لاکرز کے پاس)


لڑکی 7: آداب Stephanie! کیا میں تم سے ایک سیکنڈ بات کر سکتی ہوں؟


Stephanie: ہاں، ضرور


لڑکی 7: میں نے کچھ لوگوں کو باتیں کرتے سنا ہے کہ تم بہت زیادہ ملاقاتیں کرتی ہو۔


Stephanie: واقعی؟ کون؟


لڑکی 7: خیر، Taylor نے تمہاری اور Ezra کی مال میں ریکاڈنگ کی اور اسے اپنی snap chat سٹوری پر ڈالا۔


Stephanie: او میرے خدا، میں سمجھتی تھی ہم دوست ہیں۔ 


لڑکی 7: ہاں، بہرحال میں معافی چاہتی ہوں۔ مجھے لگا تمہیں معلوم ہونا چاہیئے۔


Stephanie: مجھے بتانے کا شکریہ۔

--------

(کیفے ٹیریا میں)


لڑکی 1 : اس کے اتنے دوست کیسے ہیں؟


تمام لڑکیاں: (ایک ہی وقت بولتے ہوئے۔) شش شش وہ آ رہی ہے، وہ آ رہی ہے۔


Stephanie: آداب، Taylor!


لڑکی 2 : ہاں، کیسا چل رہا ہے؟


Stephanie: میں نے سنا ہےکہ تم نے مجھے اور Ezra کو مال میں دیکھا اور تصویر اپنے snap chat سٹوری پر میری 
اجازت کے بغیر ڈال دی۔


لڑکی 2 : ہاں، میں نے کیا، لیکن کیا اس سال میں یہ تمہارا پانچواں دوست نہیں ہے؟ تمہیں صبر کرنے کی ضرورت ہے کیونکہ لوگ واقعی افواہیں پھیلا رہے ہیں۔


Stephanie: ہاں، اور تم اسے شائع کر رہے مزید بڑھا رہی ہو۔ میں تمہیں اپنی دوست سمجھتی تھی۔


لڑکی 2 : ہاں، میں ہوں، مگر ایک صحیح Stephanie کی۔


Stephanie: اپنی سٹوری سے تصویر ابھی ختم کرو۔ 


لڑکی 2 : یا کیا؟ کیا تم مجھ سےلڑو گی؟ میں کبھی بھی کر سکتی ہوں۔


تمام لڑکیاں: لڑو! لڑو! لڑو! لڑو! لڑو! لڑو! لڑو! لڑو! لڑو! لڑو!


استانی:            لڑکیو رکو! رکو! تم تینوں میرے دفتر چلو ابھی!

--------
(دفتر میں)


استانی: یہ سب کیا ہے؟

Stephanie: Taylor میری سماجی زندگی میں دخل اندازی کر رہی تھی۔ جس کا اس سے کوئی تعلق نہیں۔ اس نے مال میں میری اور میرے    دوست کی ویڈیو اپنے snap chat سٹوری پر ڈالی ہے۔


استانی: یہ سب ضابطۂ اخلاق کی خلاف ورزی ہے۔ صفحہ 9 کے مطابق لڑائی جھگڑے کی سختی سے ممانعت ہے۔ اس میں یہ بھی لکھا ہے کہ آپ سکول میں اپنا فون آن نہیں رکھ سکتے۔ لڑکیوں، آپ سب نے BYOD سکول کے معاہدے پر دستخط کیئے ہیں۔ آپ دونوں نے اس بات پر اتفاق کیا ہے کہ آپ اپنی ڈیوائس سکول میں صرف تعلیمی مقاصد کیلیئے استعمال کریں گے۔ یہ کون سی تعلیمی وجہ ہے۔ 


لڑکی 1 اور 2 : کوئی نہیں


استانی: بالکل۔ اور تم نے کسی کی ویڈیو اس کی اجازت کے بغیر بنائی۔ صفحہ 10 کے مطابق آپ باہر کے جھگڑے سکول کے اندر نہیں لا سکتے۔ آپ لوگ تعلیمی ماحول میں خلل ڈال رہے ہیں۔ آپ اسے کیسے ٹھیک کر سکتے ہیں؟


لڑکی 2 : Stephanie، میں تم سے تمہاری اور Ezra کی مال میں ویڈیو بنانے پر معافی مانگتی ہوں۔ یہ واقعی اچھا نہیں تھا۔


لڑکی 1 : اور تم دونوں کے درمیان لڑائی کا آغاز کروانا بھی میرے لیئے اچھا نہیں تھا۔ معافی چاہتی ہوں۔


Stephanie: معافی مانگنے پر شکریہ۔ میرا خیال ہے کہ ہم سب نے آج ایک سبق سیکھا ہے۔ 


استانی:            ہاں، ہم نے سیکھا۔ اب واپس جماعت میں جاؤ۔ 


ویڈیو 5: تلاش اور ضبطگی


ویڈیو کا مقام: باہر بنچ پر/لائبریری


طالبہ 1 : آداب


طالبہ 2 : کیا چل رہا ہے؟ کیا تم سامان لائی ہو؟


طالبہ 1 : ہاں، یہ ابھی میرے بستے میں ہے۔


طالبہ 2 : ارے تم کافی خطرہ اٹھا رہی ہو۔ یہ بات پھیلی ہوئی ہے کہ تم نے کل رات سب کو یہ بات بتا دی ہے۔


طالبہ 1 : خیر، یہ سکول کا آخری دن ہے۔  میں چاہتی ہوں کہ میں مختلف نظر آؤں۔


طالبہ 2 : تمہیں معلوم ہے کہ اگر پرنسپل کو معلوم ہو گیا تو وہ تمہارا سامان لے سکتی ہیں۔


طالبہ 1 : خیر، یہ میرا سامان ہے اور وہ میرا لاکر اور میرا بستہ نہیں دیکھ سکتیں۔ 


طالبہ 2 : حقیقت میں، اگر ان کے پاس شک کرنے کی وجہ ہے تو وہ تمہیں، تمہارے لاکر اور تمہارے بستے کی تلاشی لے سکتی ہیں۔


طالبہ 1 : پھر میں تسلی کروں گی کہ ایسا نہ ہو۔

--------

(لائبریری میں)


طلباء میز کے گرد بیٹھے ہوئے: سب ایک ہی وقت میں ایک دوسرے سے باتیں کرتے ہوئے۔


استاد:             آداب لڑکیو۔ براہ مہربانی، Lily کیا ہم آپ سے ایک منٹ بات کر سکتے ہیں۔


لڑکیاں: اوووہہہہہ!!!


(دفتر میں)


استانی:                ہم نے بہت سی رپورٹس اور تمہارا ٹیوٹر پیج دیکھا ہے۔۔۔


استاد:            ظاہر کر رہا ہے کہ تمہارا سکول املاک پر بہت سا منضبط مواد لانے کا ارادہ ہے۔


استاد 2 : لہذا ہمیں تمہارے لاکر اور تمہارے بستے کی تلاشی لینا ہے۔ پرنسپل، یہاں کچھ اشیاء ہیں جن کے بارے میں Lily بات کر رہی تھی۔


استانی:                وضاحت کرو کہ تم یہ اشیاء میرے سکول میں کیوں لائی ہو۔


طالبہ 1 :             میں یہ ککروندا اپنی پسندیدہ استانی محترمہ Johnson کیلیئے لائی ہوں۔


استاد: یہ پھول نہیں بیج ہیں!


طالبہ 1 : اوہ!


استانی:               یہ ضابطۂ اخلاق کی سنگین خلاف ورزی ہے۔ میں SRO [سکول میں تعینات پولیس افسر] کو فون کر رہی ہوں اور تمہارے 
والدین کو مطلع کر رہی ہوں۔


استاد:        اس کا نتیجہ تمہاری معطلی، اخراج اور ممکنہ گرفتاری بھی ہو سکتی ہے۔ ہو سکتا ہے کہ تمہیں منضبط مواد کے استعمال سے  روک تھام کا پروگرام۔

طالبہ 1 : میرا خیال ہے کہ Jess ٹھیک کہہ رہی تھی۔



ویڈیو 6:  منضبط مواد 


ویڈیو کا مقام: باہر بنچ پر


گروپ: آداب دوستو! ۔۔۔آداب دوستو!


طالبعلم 1 : کیا تم لوگوں نے ضابطۂ اخلاق کے ٹیسٹ کیلیئے پڑھائی کی؟


گروپ: نہیں


طالبہ 2 : پڑھائی، کس لیئے؟ مجھے یہ سب پہلے ہی معلوم ہے!


طالبعلم 3 : تمہیں پڑھنے کی ضرورت ہے۔ تم جان کر حیران ہو جاؤ گے کہ تمہیں کیا معلوم نہیں ہے۔


طالبہ 4:            میں نے ضابطۂ اخلاق کا ٹیسٹ لیا اور وہ آسان تھا۔


طالبعلم 3 : لیکن، کیا تم نے اس کیلیئے پڑھائی نہیں کی؟


طالبہ 4:            آں، ہاں، Jack ٹھیک کہہ رہا ہے۔ تمہیں پڑھنا چاہیئے۔ ٹیسٹ کے کچھ سوالات پیچیدہ تھے۔  


طالبہ 5:            بتانے کی ضرورت نہیں، اگر تم فیل ہو جاؤ، تو تمہیں ٹیسٹ دوبارہ لینا پڑے گا جب تک پاس نہ ہو۔


گروپ: اوہ، واؤ!


طالبہ 6:            لیکن مجھے پہلے ہی سگریٹ نوشی، شراب نوشی اور ادویات اور منشیات فیلافینیا۔۔۔


گروپ: (کھسیانی ہنسی ہنستے ہوئے)۔۔۔ یہ پیرافرنیلیا ہے!


طالبہ 6:             ہاں، وہ ہی۔


طالبعلم 7: ہر کوئی جانتا ہے کہ تم سکول میں، سکول کے آس پاس یا سکول بس پر، یا حتی کہ سکول کے قریب بھی سگریٹ نوشی یا منشیات کا استعمال نہیں کر سکتے۔ یہ عام سمجھ بوجھ کی بات ہے۔


طالبہ 6: خیر، فرض کرو اگر چوتھے پریڈ میں تمہارے سر میں درد ہے، تم میری طرح اپنے بستے میں ٹائی لینول رکھ سکتے ہو اور پھر سب ٹھیک ہے کیونکہ ٹائی لینول اصل میں منشیات نہیں سمجھی جاتی۔


گروپ: غلط جواب


طالبہ 4 : دیکھو، اس لیئے تمہیں ضابطۂ اخلاق ٹیسٹ کے بارے میں پڑھنے کی ضرورت ہے۔ Jessica ٹھیک طریقے سے پیرافرنیلیا نہیں بول سکتی اور تم سمجھتی ہو کہ سکول میں ٹائیلی نال لانا درست ہے۔


طالبہ 6: میں اپنا انہلر(Inhaler) اپنے سکول کے بستے میں رکھتی ہوں تاکہ دمے کے حملے کی صورت میں، میں اسے استمعال کر سکوں اور میری امی کو اس بارے میں معلوم ہے لہذا مجھے پتہ ہے سب ٹھیک ہے۔ لہذا مجھے اس کے بارے میں پریشان ہونے کی ضرورت نہیں۔


گروپ: غلط جواب


طالبعلم 1 : ہاں، تم اپنا انہیلر سکول لا سکتی ہو مگر کیا سکول نرس اس کے بارے میں جانتی ہے؟ 

طالبہ 6:            تو رکو، رکو، رکو۔ اگر میرے سر میں درد ہے تو۔۔۔


طالبعلم 7: یا سانس نہیں لے سکتے۔۔


طالبہ 2 اور 8: یا معدے میں درد ہے۔


طالبہ 8: میرے لیئے موٹرن [Motrin] بہت ضروری ہے تو ہمیں چاہيئے کہ ہم موٹرن کو منشیات سمجھنے کے خلاف ووٹ دیں۔


طالبہ: زندگی موٹرن کے بغیر ایسی ہے جیسے میکرونی، پنیر [cheese] کے بغیر۔ جیسے فرنچ فرائیس، کیچ اپ کے بغیر۔   جیسے۔۔۔جیسے۔۔۔


طالبہ:            جسیے سیل فون کسی ڈیٹا پلان کے بغیر!


گروپ: نہیں!!!!


طالبہ 5: سنو، آرام سے!  تم سکول میں موٹرن لے سکتے ہو لیکن تمہارے والدین کو کچھ فارم پر دستخط کرنا ہوں گے اور موٹرن اور سکول نرس کو دینا ہو گا۔ تم ایسے ہی موٹرن سکول نہیں لا سکتے۔ 


طالبہ 4 : ایسا ہی ایسپرین اور انہیلر رکھنے سے متعلق ہے۔ یہ اس طرح نہیں ہے کہ تم اسے رکھ نہیں سکتے مگر تمہیں ان چیزوں کو استعمال کرنے کیلیئے مناسب طریقہ کار کا استعمال کرنا ہو گا۔


طالبعلم 1 : یہ ضابطۂ اخلاق کے کتابچے کے صفحہ نمبر 14 پر لکھا ہوا ہے۔۔۔اس طرح کی سبھی ادویات فوری طور پر سکول نرس یا سکول کے مناسب عملے کے حوالے کردی جائیں اور طالبعلم/طالبہ صرف سکول نرس یا سکول کے موزوں فرد کی منظوری سے ہی انہیں استعمال کر سکتے یا اپنے پاس رکھ سکتے ہیں۔


گروپ: اوہ ہ ہ ہ!


طالبہ 5: کیا تم لوگوں کو معلوم ہے کہ نسخہ جاتی ادویات کو  قانونی ادویات کے طور استعمال کرنے کے وہی نتائج ہو سکتے ہیں۔


طالبہ:            تمہارا کیا مطلب ہے؟


طالبعلم 3 : تم سکول سے نکالے جا سکتے ہو اگر تم منضبط مواد یا اس جیسا منضبط مواد یا بھنگ سکول کی املاک یا پیش کردہ سرگرمیوں پر لاتے ہو۔ 


طالبہ 8: خیر میں اس بارے میں پریشان نہیں ہو کیونکہ میں منشیات استمعال نہیں کرتی اور نہ ہی میں یہ استعمال کروں گی۔ میرے والدین مجھے مار دیں گے۔ 


طالبعلم 1 : سنو دوستو، چلو ضابطۂ اخلاق ٹیسٹ کی تیاری کیلیئے چلیں تاکہ یہ لوگ پہلی دفعہ میں ہی اسے پاس کر لیں!


گروپ: ہاں، یہ اچھا خیال ہے!

--------

(کمرۂ جماعت میں)


طالبہ 1 : سنو، میرے بستے میں کچھ شراب ہے۔ میں دوپہر کے کھانے میں لاؤں گی۔


طالبعلم 2 : تم سچ کہہ رہی ہو، یہ بالکل بھی ٹھیک نہیں ہے۔ تم کسی مشکل میں پھنس سکتی ہو۔


طالبہ 1 : نہیں، اگر تم اپنا منہ بند رکھو گے۔


طالبعلم 2 : جو بھی، [مجھے پرواہ نہیں]


طالبہ 1 : میرا بھی یہی خیال ہے۔


استاد:            صبح بخیر جماعت! ہم اس ورک شیٹ کے ساتھ اپنا کام شروع کریں گے۔ میں چاہتا ہوں تم اسے 10 منٹ میں مکمل کر لو۔ 
ٹھیک ہے؟


طالبہ 1 : (دوسرے طالبعلم کو نوٹ دیتی ہے)


طالبعلم 3: تو، میں نے سنا کہ تم مخبری کرنے کا سوچ رہے ہو۔


طالبعلم 2 : دیکھو دوست، تمہیں معلوم ہے کہ شراب رکھنا سکول کے اصول کے خلاف ہے۔


طالبعلم 3 : شششش!


طالبہ 1 : خیر تم نے سنا وہ کیا کہتے ہیں۔۔۔


طالبعلم/طالبہ 1 & 3 : مخبری کرنے والے کی خیر نہیں۔


طالبعلم 2 : کیا؟


طالبعلم 3 : اس کے بارے میں فکر مت کرو، ایسا نہیں ہے کہ ہم ویسے بھی پکڑے جا رہے ہیں۔ 


استاد:            کیا بات ہے Sasha؟


طالبہ 1 : کیا میں غسل خانے جا سکتی ہوں؟


استاد:            ٹھیک ہے، مگر جلدی کرو۔


طالبعلم 2 : سنو Ashley، کیا میں تمہیں کچھ بتا سکتا ہوں؟


طالبہ 4:    (سر کو اوپر نیچے ہاں کیلیئے ہلاتے ہوئے)


طالبعلم 2: سنو، تمہیں وعدہ کرنا ہو گا کہ یہ ہمارے درمیان رہے گا، ٹھیک ہے؟


طالبہ 4 : اچھا، ہاں، ضرور۔


طالبعلم 2 : سنو، میری بہن اور Evan کے بستوں میں شراب ہے اور ان کا کہنا ہے کہ میں کسی کو نہیں بتاؤ گا کیونکہ وہ میری بہن ہے۔ 


طالبہ 4 : چونکہ تم میرے اچھے دوست ہو، اس لیئے میں تمہیں بتا رہی ہوں۔ تم بیوقوف بن رہے ہو۔ تمہیں اس کے بارے میں بتانا چاہیئے۔ 


طالبعلم 2 :  مجھے نہیں معلوم کہ اس بارے میں اگر تم صحیح ہو۔ 


طالبہ 4 : اچھا، اگر تمہیں میری مدد نہیں چاہیئے، تو تم نے پوچھا کیوں؟


طالبعلم 2 : ٹھیک ہے، اچھا۔ چلو۔


(استاد ہاتھ اٹھائے ہوئے طالبعلم کی طرف آتا ہے)


طالبعلم 2 : سنیں، کیا ہم نیچے گائیڈنس کیلیئے جا سکتے ہیں؟


استاد:            ضرور۔


طالبعلم 2 : شکریہ۔

----

(دفتر میں)


کونسلر:            آداب طلباء، کیا چل رہا ہے؟


طالبعلم 2 : آ، ٹھیک ہے۔ محترمہ Parker، ہمیں آپ کو کچھ بتانا ہے۔


کونسلر:        کیا چل رہا ہے؟


طالبہ 4 : اصل میں، Albert کی بہن Sasha کے پاس شراب ہے۔


کونسلر:    اس کے پاس شراب ہے؟


طالبہ 4 : ہاں۔


کونسلر:    تم لوگوں کو اس بارے میں کیسے پتہ ہے؟


طالبعلم 2 : اصل میں، اس نے صبح مجھے بتایا تھا۔


کونسلر:    کیا تم لوگوں کو معلوم ہے کہ اس وقت وہ کہاں ہے؟


طالبہ 4 : میرا خیال ہے کہ اس کے بستے میں۔


کونسلر:              آپ لوگوں کا مجھے مطلع کرنے کا بہت بہت شکریہ۔ تم لوگوں کو احساس ہے کہ اگر تم آگے آ کر نہیں بتاتے تو تم بھی مشکل    میں پھنس سکتے تھے۔


دونوں طلباء: ہاں۔


کونسلر:            ٹھیک ہے، ہم ایک منٹ کیلیئے باہر جا رہے ہیں۔ میں چاہتی ہوں کہ تم دونوں بیان لکھو۔


طالبعلم 2 : ٹھیک ہے، کوئی مسئلہ نہیں۔


--------


کونسلر:        Sasha، اندر آؤ۔


Sasha:      میں یہاں کیوں آئی ہوں؟


کونسلر:    تمہارا کیا خیال ہے کہ تم یہاں کیوں آئی ہو؟


Sasha:    مجھے پتہ نہیں۔


کونسلر:    باہر افواہیں ہیں کہ تمہارے بستے میں شراب ہے۔ 


(خاموشی جب ایک اور استانی اندر داخل ہوتی ہے) 


Sasha:      آپ کے پاس میرا سامان کیوں ہے؟


استانی: براہ مہربانی بدتمیزی مت کرو۔ ہمیں اطلاع ملی ہے کہ آپ کے لاکر میں شراب ہو سکتی ہے۔ جو کہ شاید آپ کو معلوم ہے کہ ضابطۂ اخلاق کی خلاف ورزی ہے۔  ہمیں آپ کی اشیاء کی تلاشی لینے کا حق ہے۔


Sasha: آپ میری چیزوں کی تلاشی نہیں لے سکتے۔


استانی:    جی ہاں، ہم لے سکتے ہیں۔ ہمارے پاس اختیار ہے۔


Sasha: آپ تلاشی لینے سے بعض آئیں، میرے پاس کوئی شراب نہیں ہے۔


کونسلر:            یہ کیا ہے؟


Sasha: پانی، اور کیا! اور کیا ہو سکتا ہے؟


کونسلر:            اچھا، یقینی طور پر اس کی خوشبو پانی جیسی نہیں ہے۔


Sasha: یہ صرف میں نہیں۔ Evan بھی اس کے بارے میں جانتا تھا۔ 


کونسلر:            (فون پر) کیا آپ براہ مہربانی Evan Roberts کو میرے گائیڈنس دفتر میں بھیج سکتے ہیں۔


Evan: یہ میری غلطی نہیں ہے۔ میں اس کے ساتھ صرف اس لیئے تھا کیونکہ یہ میری اچھی دوست ہے۔ یہ اس کا اپنا عمل تھا۔ 


استانی:    آپ دونوں کو معطلی اور شاید اخراج کا سامنا کرنا پڑے۔ مجھے آپ دونوں سے بہت مایوسی ہوئی ہے۔ 



ویڈیو 7: طالبعلم/طالبہ کا لباس اور ظاہری تاثر


ویڈیو کا مقام: کمرۂ جماعت


طالبہ 1 : کیا نہیں پہننا چاہیئے [کی جماعت] میں خوش آمدید!


طالبہ 2 : جہاں ہم آپ کی پرنس ولیئم کاونٹی پبلک سکولز میں فیشن میں آگے رہنے میں مدد کرتے ہیں۔ 


طالبعلم 3 : کیا آپ کو معلوم ہے کہ PWCS کے طلباء کیلیئے لباس کے قواعد و ضوابط ہیں؟


طالبعلم 4 : جی ہاں، مجھے معلوم ہے۔ آج ہم لڑکیوں کیلیئے [سکول میں] کر سکنے والے فیشن پر روشنی ڈالیں گے۔


طالبہ 2 : اووو بہت زیادہ ٹانگیں نظر آ رہی ہے! اب سٹوڈنٹس سروسز سے، ہم اپنی ماہر  فیشن Mrs. Custard کو خوش آمدید کہتے ہیں!


Mrs. Custard: میں یہاں آ کر بہت خوش ہوں کیونکہ میں پرنس ولیئم کاونٹی پبلک سکولز کیلیئے ماہر فیشن ہوں۔ اور میں نے سنا ہے کہ پرنس ولیئم کاونٹی میں بہت ہی اچھے طلباء ہیں لیکن کیا یہ سکول میں پہننے کیلیئے اچھا لگتا ہے؟


طلباء:            نہیں۔۔۔


Mrs. Custard: تو کیونکہ، فنگر ٹپ [جب آپ اپنے بازو نیچے لمبے چھوڑیں تو جہاں تک آپ کی انگلی کا کنارہ جائے وہاں تک جسم کو ڈھانپنا ضروری ہے] اصول کی وجہ سے، میرا خیال ہے کہ اسے کچھ نیچے آنا چاہیئے۔ کیا یہ اچھے نہیں لگ رہے؟


طالبہ 2 :  میں انہیں ہفتے کو پہننا چاہوں گی۔


Mrs. Custard: یہی تو بات ہے. یہ ہفتے کیلیئے اچھی ہے اور یہ سکول کیلیئے۔ اور یہ فیشن کے ماہر کی طرف سے۔ آپ کا کیا خیال ہے؟


طالبہ 2 : میں اتفاق کرتی ہوں۔ 


Mrs. Custard: آپ کا شکریہ۔ فیشن کے ماہر سے۔


طالبعلم 3 : کیا زبردست ٹوپی ہے۔


طالبہ 1 : باہر کیلیئے بہت اچھی مگر سکول کیلیئے اچھا انتخاب نہیں ہے۔ 


طالبعلم 3 : ایسا کیوں ہے؟


طالبہ 1 : یہ معلوم کرنے کیلیئے، اپنی فیشن کی ماہر کو بلاتے ہیں!


Mrs. Custard: میں دوبارہ آ گئی؛ یاد رکھئیے میں فیشن کی ماہر ہوں۔ یہ کیا ہے؟ وہ کہاں جا رہی ہے؟ کیا وہ سکول جا رہی ہے؟


طلباء:            نہیں۔


Mrs. Custard: اب میں آپ کو بتانا چاہوں گی کہ ماہر فیشن کی طرف سے یہ ساحل کیلیئے بہت زبردست ہے۔ اوہ، مجھے وہ چشمہ بہت پسند آیا، وہ بہت اچھا ہے۔ لیکن سکول کیلیئے میرا خیال ہے کہ ہمیں وہ ٹوپی اتارنا ہو گی، عینک اتارنا ہو گی اور میرا خیال ہے کہ اسے سکول کیلیئے اپنے کندھوں پر کچھ پہننا ہو گا۔ تو چلو ٹوپی اتارو، عینک اتارو اور اس کے کندھے ڈھک دو۔ ماہر فیشن کی طرف سے، میرا خیال ہے یہ اچھا ہے۔ آپ کا کیا خیال ہے؟


طالبہ 1 : میرا خیال ہے یہ خوبصورت ہے۔


طالبہ 3 :  واؤ، سلمبر  پارٹی [ایسی پارٹی جہاں نوجوان خاص طور پر لڑکیاں ایک گھر میں رات کو وقت گزارتی ہیں]؟


طالبہ 4 : آپ کے خیال میں ایسا ہے مگر نہیں۔ ایک خراب فیشن کا انتخاب۔


طالبہ 3 :             ہمیں اپنی ماہر فیشن چاہیئے۔


Mrs. Custard: اور وہ یہاں ہیں، پرنس ولیئم کاونٹی کی ماہر فیشن۔۔۔ یہ کیا ہے؟


طالبہ 4 : یہ سکول کیلیئے مناسب نہیں ہے۔


Mrs. Custard: میرا خیال ہے نہیں! خوبصورت طالبہ۔ خوبصورت کپڑے۔ لیکن، پرنس ولیئم کاونٹی پبلک سکولز کیلیئے نہیں۔  ہم اسے منع کریں گے، جب تک کہ پرنسپل کی طرف کی خاص اجازت نامہ نہیں ہے۔ اور یہ پرنس ولیئم کاونٹی کی ماہر فیشن کی طرف سے ہے۔ آپ کا کیا خیال ہے؟


طالبعلم 3 :  اگر آپ ان کپڑوں میں سوتے ہیں، انہیں سکول میں مت پہنیں۔


Mrs. Custard: مجھے یہ اچھا لگا!


طالبہ 1 : تو، اگر سکول کے فیشن میں کامیابی چاہتے ہیں، تو براہ مہربانی۔۔۔


طالبہ 2 : ۔۔۔تو ایسے شارٹس اور لباس پہنیں جو آپ کی انگلی کے کنارے سے شروع ہوں۔ اس بات کو یقینی بنائیے کہ سکول میں پاجامہ یا رات کا آرام دہ سوٹ مت پہنیں۔  


طالبہ 4 : سر پر کچھ مت پہنیں بشرطیکہ وہ آپ کے چہرے کا حصّہ ہو۔


طالبہ 2 : چپل مت لائیں۔ انہیں گھر پر ہی رکھئیے۔ لیکن، مناسب جوتے پہنیئے۔ 


تمام: بہترین مشورہ، اگر فیشن کے انتخاب کے بارے میں کوئی سوال ہے تو، اپنے اندر کی آواز سنیئے۔

--------

(ہال وے)


  Mr. Smith: صبح بخیر لڑکو۔ آج بہت ہی خوبصورت دن ہے۔


طالبعلم 1 : صبح بخیر محترم Smith۔ آپ لوگ کیسے ہیں؟


Mr. Smith: ٹھیک، شکریہ۔ پوچھنے کا بے حد شکریہ. 


طالبعلم 2 : کوئی بات نہیں۔


Mr. Smith: میں آپ کے لباس کے متعلق بات کرنے آیا ہوں۔

طالبعلم 3 : واقعی؟ میرا خیال ہے کہ ہمارے کپڑے سکول کیلیئے ٹھیک ہیں۔


Mr. Smith: بظاہر نہیں۔ آپ کو ہمارے DTI سکواڈ سے مدد چاہیئے۔


طلباء:      DTI سکواڈ؟


Mr. Smith: جی ہاں، لباس کو متاثر کرنے والا ہمارا سکواڈ۔ (واکی ٹاکی پر) DTI سکاڈ، مجھے مکسنگ بال پر آپ کی مدد کی ضرورت ہے۔


DTI سکواڈ: محترم Smith، ہم آپ کی پریشان کال کی وجہ سمجھ سکتے ہیں۔ لڑکو، براہ مہربانی ہمارے ساتھ ایک مختلف کمرے میں چلو۔ قطار بنا کر، ترتیب میں۔


DTI سکواڈ 2: ہیکری، ڈکری، ڈاک۔ ہم تین دستک سننے تک انتظار کریں گے۔ تین گننے کے بعد، پینتھر آپ کے اور ہمارے جیسے کپڑے پہنے باہر آئيں گے۔ ہیکری، ڈکری، ڈاک۔


تمام طلباء: آپ بھی متاثر کر کے کامیابی حاصل کرنے کیلیئے لباس کی مناسب ہدایات پڑھیں۔ 


طالبعلم 1 : امن کیلیئے جانا ہے۔


طالبعلم 2 : کلاس میں جانا ہے۔


طالبعلم 3 : جانا ہے۔



ویڈیو 8: ٹیکنالوجی کا غلط استعمال


ویڈیو کا مقام: کمرۂ جماعت


استاد: جماعت، ڈائناسور پر ہمارا سبق ختم ہوتا ہے۔ بورڈ پر ہمارا کل کا گھر کا کام صفحہ نمبر 234 اور 235 ہے۔ براہ مہربانی اس بات کو یقینی بنائیے کہ آپ کل صبح صبح اس جمع کروا دیں۔ (طالبہ کو دیکھتے ہوئے) Ashley، آپ کیا کر رہی ہو؟


Ashley: جناب Smith صاحب، میں گھر کے کام کی ریکارڈنگ کر رہی ہوں تاکہ میں اسے بھولوں نہیں۔


Mr. Smith: Ashely، جب پچھلے ہفتے ہم نے ضابطۂ اخلاق پڑھا تھا تو ہم نے یہ واضح طور پر سمجھا تھا۔ طلباء استاد/استانی کی اجازت کے بغیر کوئی تصویر یا ویڈیو نہیں بنا سکتے۔


Ashley: معافی چاہتی ہوں جناب Smith صاحب: جب ہم نے ضابطۂ اخلاق کے بارے میں پڑھا تھا، مجھے یاد رکھنا چاہیئے تھا۔


Mr. Smith: تمہیں یاد رکھنا چاہیئے تھا، جیسے تمہارے دوسرے ہم جماعتوں نے رکھا ہے۔ 


Ashley: آپ کا مطلب ہے۔۔۔وہ سب؟

--------

(کمپیوٹر کی جماعت)


استاد:            ارے، یہ آپ کیا کر رہے ہو؟


طالبعلم :            میں PWCS کی ویب سائٹ پر کچھ چیزیں شامل کر رہا ہوں تاکہ وہ خوبصورت لگے۔


استاد: کیا آپ کو کچھ یاد نہیں کہ ہم نے ضابطۂ اخلاق کے بارے میں جو بات کی تھی۔ یہ ٹیکنالوجی کے اصول کی واضح خلاف ورزی ہے۔ یہ کمپیوٹر کا غلط استعمال ہے۔ آپ سکول کی ویب سائٹ ہیک کر رہے ہو۔


طالبعلم:    میرا مطلب ہے کیا یہ اچھا نہیں لگ رہا؟


استاد :            تم اپنی کمپیوٹر کی رعایتیں کھو دو گے۔


طالبعلم:            ویسے مجھے کمپیوٹر کی ضرورت ہے ہی کیوں؟


(سوچتے ہوئے) کیوں؟


اوہ، میرا خیال ہے آپ ٹھیک کہہ رہے ہو۔ میں معافی چاہتا ہوں۔ میں واپس کام شروع کرتا ہوں۔


استاد/استانی: بہت اچھا۔ اسے ختم کرو۔ اپنے کام پر واپس جاؤ۔


طالبعلم:             ٹھیک ہے۔


ویڈیو 9: نامناسب رویے


ویڈیو کا مقام: (ہال وے)


طالبعلم 1 : مجھے نہیں معلوم کہ PDA کس کا مخفف ہے؟


طالبہ 2 : اوہ، کون پرواہ کرتا ہے؟


طالبعلم 1 : سنو، کیا تم میرے ساتھ جمعے کی رات کو کھیل دیکھنے چلو گی؟


طالبہ 2 : ضرور!


استاد :           معاف کیجیئے محترم اور محترمہ۔ اس سکول میں کوئی PDA نہیں۔


طالبعلم 1 : PDA کیا ہے؟


استاد:            اس کا مطلب ہے پیار کا کھلے عام اظہار۔


طلباء 1 اور 2  : پیار کے کھلے عام اظہار کا کیا مطلب ہے؟


استاد : اس میں گلے ملنا، بوسہ لینا، ہاتھ پکڑنا یا طلباء کو ایک دوسرے کو چھونا یہ ظاہر کرنے کیلیئے کہ وہ ایک دوسرے کو پسند کرتے ہیں۔ یہ بری چیز نہیں ہے مگر یہ سکول کیلیئے مناسب نہیں ہے۔ 


طالبعلم 1 : اوہ، جناب ہم معافی چاہتے ہیں، یہ دوبارہ نہیں ہو گا۔


استاد:             ہم اس کی قدر کرتے ہیں۔


Lexi: سنو دوستو، یہ Lexi ہے! سکول میں کوئی .P.D.A نہیں۔ براہ مہربانی اور شکریہ۔

--------

طالبعلم 1 : جوشٹ [جھوٹ موٹ کی لڑائی]


طالبعلم 2 : جوشٹ [جھوٹ موٹ کی لڑائی]


گروپ 1 : جوشٹ [جھوٹ موٹ کی لڑائی]


گروپ 2 : جوشٹ [جھوٹ موٹ کی لڑائی]


(دونوں گروپ چلاتے ہوئے)


طالبہ 3 :  اس بکواس کو Marstellar کی بادشاہت سے نکال دینا چاہیئے!


(دونوں گروپ مزید چلاتے ہوئے)


لڑکی 1 : ہمیں خواتین کو بتانے جانے چاہیئے!


لڑکی 2 : ہمیں ضرور جانا چاہیئے!


لڑکی 3 : وہ ایک اجلاس بلائیں گی۔

----

(دفتر میں)


لڑکی 3 : ملکہ عالیہ۔ ہم آپ سے مدد اور رہنمائی لینے آئے ہیں۔ اس بکواس کو ختم ہونا چاہیئے!


ملکہ: اس کا حل۔۔۔ضابطۂ اخلاق کے اندر ہے۔ میری رعایا آپ نے بہت اچھا کیا ہے۔ کیونکہ ایسا تحریر ہے کہ: سلطنت کے طلباء، تصادم کو تشدد کے بغیر پرامن طریقے سے حل کرنے اور سکول کے عملے سے رہنمائی حاصل کرنے کے ذمہ دار ہیں۔ 


بڑی ملکہ: یاد رکھئیے، یہ یہاں کہا گیا ہے، طلباء اپنے ان رویوں کو درست کریں جو ان کے خیال میں دہمکی خیز نہیں ہیں۔ جیسے اودھم مچانا اور ادھر ادھر کھیلنا، خاص طور پر جب وہ دوسروں کیلیئے چوٹ، خلل یا بے آرامی کا سبب بنے۔ 


لڑکی 4 : یہ ایک زبردست منصوبہ ہے۔


ملکہ کی آواز: خواتین، حضرات، مہمان، میرے پاس ایک زبردست خبر ہے! اب Marstellar کی سرزمین پر امن اور سکون ہو گا!

ویڈیو 10: ﺳﮑﻭﻝ ﺑﺱ ﻣﻳں ﺳﻔﺭ ﮐﮯ ﻗﻭﺍﻋﺩ
بمقام: سکول بس


(سکرین پر سکرپٹ ہے)


سین 1 : بس کا انتظار کرتے ہوئے: کیا نہیں کرنا چاہیئے!


سین 2 : بس کا انتظار کرتے ہوئے: کیا کرنا چاہیئے!


سین 3 : بس پر چڑھتے ہوئے: کیا نہیں کرنا چاہیئے!


سین 4: بس پر چڑھتے ہوئے: کیا کرنا چاہیئے!


سین 5: بس کی نشستوں پر: کیا نہیں کرنا چاہیئے!


سین 6: اشیائے خوردونوش: کیا نہیں کرنا چاہیئے!


سین 7: کچرا: کیا نہیں کرنا چاہیئے!


سین 8: باتیں: کیا نہیں کرنا چاہیئے!


سین 9: باتیں: کیا کرنا چاہیئے!


سین 10: آپ کو بس قواعد کہاں مل سکتے ہیں؟



ویڈیو 11: غلطیوں والی ریل [ویڈیو]


ویڈیو کا مقام: مختلف مقامات


طالبہ 1 : میرے پاس ایک تجویز ہے۔ مڈل سکول کے طلباء کو ایک ویڈیو بنانی چاہیئے۔ مڈل سکول کے ذریعے۔۔۔

تمام: مڈل سکول کیلیئے!

 Dr. Walts: میرا خیال ہے کہ یہ ایک زبردست تجویز ہے!


طالبعلم 2 : ہم اس کیلیئے کیا کر سکتے ہیں؟


(ہنسی)

----

لڑکی: Benson  اور Pennington ضابطۂ اخلاق۔۔۔اخلاق ٹیک 1۔ (ہنسی)


لڑکا: او ہاں! 


(ہنستے ہوئے)

----

لڑکی: کیا۔۔۔کیا استعمال کرنا چاہیئے۔۔۔ بھا۔۔۔ اپنی لائن بھول گئی!


(ہنستے ہوئے)

----

آواز: تمہارا کیا مطلب ہے؟


لڑکا: تم سکول سے نکالے جا سکتے ہو اگر تم منضبط مواد، اس جیسا منضبط مواد یا بھنگ سکول کی املاک یا آآآآ۔۔۔

----

آواز: ٹھیک ہے، میں چاہتا ہوں تم دونوں اس طرف سیدھے  دیکھو۔


لڑکی: صبر کرو! تم نے کہاں دیکھا؟

----

بڑی ملکہ: خاص طور پر جب رویہ۔۔۔


لڑکیاں: (اونچا ہنستے ہوئے)

--------
استانی: یہ سب ضابطۂ اخلاق کی خلاف ورزی ہے۔ صفحہ 9 پر کہا گیا ہے کہ آپ لڑائی شروع نہیں کر سکتے۔ اور یہ بھی۔۔۔(ہنسی شروع ہوتی ہے) آپ نے ہنسنا کیوں شروع کیا؟


لڑکی: معافی چاہتی ہوں۔

----

لڑکا: یہ ایک طرح سے سکول کے اصولوں اور ضوابط کا خاکہ ہے۔ (ہنستے ہوئے)

----

طالبعلم/طالبہ 1 : اوہ۔۔۔


آواز: ٹھیک ہے، دوبارہ شروع کریں۔


طالبہ 2 : ہاں۔۔۔(ہنستے ہوئے)


طالبہ 1 : کون یہ لائن کہنا بھول گیا۔۔۔(ہنستے ہوئے)


طالبعلم 2 : کوئی بات نہیں، ایسا ہوتا ہے۔

------

استاد : اس کا نتیجہ آپ کی معطلی، اخراج یا شاید نتیجہ۔۔ آپ ۔۔ کی پولیس افسر کو بلانا ہو سکتا ہے ۔۔۔۔۔(ہنستے ہوئے)

----

آواز: سب خاموش۔ 3 ، 1 ،2 ایکشن۔


طالبہ:            میں توجہ نہیں دے سکتا۔۔۔(باتوں کے اوپر پاں پاں) (ہنسی)